The news is by your side.

Advertisement

ٹریفک پولیس اہلکاروں کی حفاظت کےلیےرینجرزسے مدد طلب

کراچی: ٹریفک پولیس کونشانہ بنانےوالاگینگ سرگرم ہوگیا،اہلکاروں کی حفاظت کےلیےرینجرزسے مدد مانگ لی گئی،حساس علاقوں میں مغرب کے بعد چوکیاں بند کردی جائیں گی۔

 کراچی میں ٹریفک اہلکاروں کو نشانہ بنانے والے گینگ کی دہشت پھیل گئی،ٹریفک حکام نےرینجرز اورپولیس سےحفاظت کےلیےمدد مانگ لی جبکہ ٹریفک اہلکاروں کی حفاظت کےلیےحساس علاقوں میں مغرب کے بعد چوکیاں بند رکھنےکافیصلہ کرلیا گیا۔

 ٹریفک اہلکاروں کو پہلی بار مسلح کیا گیا،جبکہ بلٹ پروف چیکٹس بھی فراہم کی گئیں،کل گلبائی میں مسلح ہونےکے باوجود ٹریفک اہلکارجوابی فائرنہیں کرسکے تھے ۔

ٹریفک اہلکاروں پرحملے،حساس علاقوں میں چوکیاں خالی ٹریفک اہلکاروں کوحساس علاقوں میں ڈیوٹی سے روک دیا گیا۔

 حساس علاقوں میں مغرب کے بعد ٹریفک چوکیاں بھی خالی اورنگی ٹاؤن،کورنگی،پیرآباد،قیوم آباد میں اہلکاروں کی جان کوخطرہ رینجرز اورپولیس سے ٹریفک پولیس اہلکاروں کےلیےتحفظ کی اپیل کی گئی ہے۔

ٹریفک اہلکاروں کواپنی حفاظت خود کرنےکےقابل بنانےکےلیےاسلحہ چلانےکی تربیت بھی شروع کی جارہی ہے، ماہرین کےمطابق دہشتگرد ٹریفک اہلکاروں کوآسان ہدف کی وجہ سے نشانہ بنارہے ہیں۔

ٹریفک وارڈنز ایس ایس پی ٹریفک فیصل چاچڑ کے مطابق ڈیوٹی پر موجود اہلکار کے پاس اسلحہ لازمی ہوگا، واضح رہے کہ گزشتہ روزگلبائی میں دہشتگردوں کی فائرنگ کا نشانہ بننے والے اہلکاروں کے پاس تو ایس ایم جیز موجود تھیں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں