لاہور ہائیکورٹ میں اسکائپ کے ذریعے مقدمات کی سماعت -
The news is by your side.

Advertisement

لاہور ہائیکورٹ میں اسکائپ کے ذریعے مقدمات کی سماعت

لاہور: صوبہ پنجاب کے دارالحکومت لاہور کی ہائیکورٹ میں جدید ٹیکنالوجی کا استعمال کرتے ہوئے اسکائپ کے ذریعے جیلوں میں قیدیوں کے مقدمات کی سماعت کے منصوبے کا افتتاح ہوگیا۔

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائیکورٹ نے ایک اور مستحسن قدم اٹھاتے ہوئے فوری اور سستا انصاف ممکن بنانے کے منصوبے کا آغاز کردیا جس کے تحت اسکائپ کے ذریعے جیلوں میں قیدیوں کے مقدمات کی سماعت ہوگی۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ اسکائپ کے ذریعے مقدمات کی سماعت تیزی سے ہوگی۔ منصوبے کا افتتاح چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ جسٹس منصور علی شاہ نے کیا۔

وکلا نے منصوبے کو سستے انصاف کی فراہمی کا ذریعہ قرار دیا۔

افتتاحی تقریب سے خطاب میں چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ جوڈیشل ریفارمز کا آئی ٹی سے گہرا تعلق ہے، ہمیں جدید ٹیکنالوجی کا سہارا لینا ہوگا۔

انہوں نے کہا کہ ہمیں پرانے طریقوں سے ہٹ کر کام کرنا ہوگا۔ نئی نئی چیزوں سے لوگوں کے لیے آسانیاں پیدا ہوتی ہیں۔ باقی شہروں میں بھی یہ سسٹم شروع ہونا چاہیئے۔

چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ نے ڈسٹرکٹ ججز کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ ڈسٹرکٹ ججز ریفارمز کے لیے اپنا اہم کردار ادا کر رہے ہیں۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں