The news is by your side.

Advertisement

امریکی صدر ٹرمپ کا ایران سے جوہری معاہدہ ختم کرنے کا اعلان

واشنگٹن: امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ایران سے جوہری معاہدہ ختم کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایران کو ایٹمی ہتھیاروں کے حصول سے روکنا ہوگا۔

تفصیلات کے مطابق امریکا نے خود کو ایران جوہری معاہدے سے الگ کرلیا، امریکی صدر ٹرمپ نے کہا ہے کہ ایران کے خلاف سخت پابندیاں لگائیں گے، ایران سے جوہری تعاون کرنے والی ریاست پر بھی پابندیاں لگائیں گے۔

امریکی صدر نے کہا کہ ایران ریاستی دہشت گردی کی سرپرستی کرتا ہے، ایران کے ساتھ معاہدہ یکطرفہ تھا، ایران نے معاہدے کے باوجود جوہری پروگرام جاری رکھا تھا۔

ڈونلڈ ٹرمپ کے مطابق ایران دہشت گردوں کی معاونت فراہم کرتا ہے، ہمارے پاس ثبوت موجود ہیں، ایران کا وعدہ جھوٹا تھا، شام اور یمن کی کارروائی میں ایران ملوث ہے۔

امریکی صدر نے کہا کہ ایران کو معاشی پابندیوں کا سامنا کرنا پڑے گا، مشرقی وسطی میں استحکام کے لیے ہر اقدام کرنے کو تیار ہیں، ایرانی ایٹمی ڈیل امریکا کے لیے شرمناک تھی جبکہ امریکی وزیر خارجہ شمالی کوریا کے دورے پر جارہے ہیں۔ پومپیو شمالی کورین حکام سے ملاقات طے کریں گے۔

دوسری جانب امریکا اور ایران کے ساتھ جوہری معاہدے میں شامل فرانس، برطانیہ اور جرمنی نے امریکی صدر ٹرمپ کے فیصلے پر اظہار افسوس کیا ہے۔

ٹرمپ کا فیصلہ عالمی معاہدوں کی خلاف ورزی ہے، حسن روحانی

امریکی صدر ٹرمپ کے جوہری معاہدے سے الگ ہونے کے اعلان پر ایرانی صدر حسن روحانی نے کہا ہے کہ ٹرمپ کا فیصلہ عالمی معاہدوں کی خلاف ورزی ہے، امریکا ایرانی جوہری معاہدے سے کبھی مخلص نہیں تھا، ٹرمپ نے وعدہ خلافی کی ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں