The news is by your side.

Advertisement

ٹرمپ تائیکوانڈو بلیک بیلٹ کیسے بنے؟

فلوریڈا: سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ تائیکوانڈو بلیک بیلٹ بن گئے۔

تفصیلات کے مطابق مارشل آرٹس کے شوقین ڈونلڈ ٹرمپ کو اعزازی طور پر نویں ڈان بلیک بیلٹ سے نوازا گیا ہے۔

ورلڈ تائیکوانڈو اکیڈمی کا گھر کُکی وان، جسے ورلڈ تائیکوانڈو ہیڈ کوارٹر بھی کہا جاتا ہے، نے سابق امریکی صدر کو 9 ویں ڈان بلیک بیلٹ سے نوازا، یہ ایک ایسا اعلیٰ اعزاز ہے جسے پیشہ ور مارشل آرٹسٹس ہی حاصل کر سکتے ہیں۔

جنوبی کورین اکیڈمی نے ٹرمپ کو تائیکوانڈو میں بلیک بیلٹ کے ساتھ ساتھ ایک سرٹیفیکٹ سے بھی نوازا، یہ اعزاز تائیکوانڈو ہیڈ کوارٹر کے صدر لی ڈانگ نے فلوریڈا میں پام بیچ میں واقع ٹرمپ کے گھر پر جا کر دیا۔

ڈونلڈ ٹرمپ کا کہنا تھا کہ یہ ان کے لیے اعزاز کی بات ہے اور وہ سمجھتے ہیں کہ تائیکوانڈو اپنے دفاع کے لیے ایک شاندار مارشل آرٹ ہے۔

انھوں نے مزید کہا کہ اگر وہ مستقبل میں وائٹ ہاؤس واپس آتے ہیں تو وہ امریکی کانگریس میں تائیکوانڈو سوٹ پہنیں گے، جب کہ تائیکوانڈو اکیڈمی کے صدر لی نے کہا کہ میں نے سنا تھا کہ ٹرمپ تائیکوانڈو میں بہت زیادہ دل چسپی رکھتے ہیں۔

واضح رہے کہ اس سے قبل یہ اعزاز روسی صدر ولادی میر پیوٹن کو بھی دیا گیا تھا۔

ٹرمپ کی فلوریڈا کی حویلی کی دیوار پر نصف درجن تصاویر بھی دیکھی جا سکتی ہیں جن میں سے ایک میں وہ شمالی کوریا کے رہنما کم جونگ اُن کے ساتھ پانمونجوم میں مصافحہ کر رہے ہیں، جہاں وہ دونوں جون 2019 میں غیر فوجی زون میں سرحد پر ملے تھے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں