The news is by your side.

Advertisement

ٹرمپ نے گرین کارڈ لاٹری ختم کرنے کا اعلان کردیا

واشنگٹن: امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے گرین کارڈ لاٹری ختم کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس سہولت کی وجہ سے دہشت گرد امریکا میں داخل ہوتے ہیں۔

وائٹ ہاؤس میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ٹرمپ نے کہا کہ ایک روز قبل نیویارک سٹی میں دہشت گردی کا واقعہ رونما ہوا جس میں 8 افراد ہلاک ہوئے، اس حملے میں ازبک باشندہ ملوث تھا جو گرین کارڈ لاٹری کے ذریعے امریکا میں داخل ہوا۔

انہوں نے کہا کہ ’میں خود گرین کارڈ لاٹری ختم کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کانگریس سے اس سہولت کو فوری ختم کرنے کی سفارش کرتا ہوں کیونکہ اس کے ذریعے امریکا میں دہشت گرد داخل ہوئے‘۔

پڑھیں: دہشت گرد پرامن دنیا کے لیے بڑا خطرہ ہیں، ٹرمپ

ٹرمپ نے کہا کہ ہم اپنے شہریوں کو تحفظ دینے کے لیے اقدامات میں مصروف ہیں، اس لیے جلد از جلد لاٹری کی سہولت کو ختم کر کے میرٹ پر امیگریشن کا متبادل نظام لارہے ہیں۔

امریکی صدر کا کہنا تھا کہ نیویارک سٹی حملے میں ملوث ازبک باشندے کی شناخت سائی پو کے نام سے ہوئی، ملزم نے ہمارے 8 شہریوں کو موت کے گھاٹ اتارا اور یہ دہشت گردی بھی لاٹری کے ذریعے امریکا آیا تھا۔

واضح رہے کہ امریکا کی جانب سے غیر ملکیوں کے لیے گرین کارڈ لاٹری کی سروس 1990 میں متعارف کروائی گئی تھی جس سے مستفید ہونے کے لیے ہر سال 50 ہزار سے زائد امیدوار درخواستیں دائر کرتے ہیں۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں