The news is by your side.

Advertisement

ایران کے خلاف فوجی کارروائی کا امکان موجود ہے، ٹرمپ

لندن: امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ ایران کے خلاف فوجی کارروائی کا امکان موجود ہے لیکن مذاکرات ہماری ترجیح ہے۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ایک انٹرویو کے دوران کہا کہ ایران کے خلاف فوجی کارروائی کا امکان موجود ہے، صدارت سنبھالی تو ایران نمبر ون دہشت گرد ملک تھا اور شاید آج بھی ہے۔

امریکی صدر نے کہا کہ جب وہ اقتدار میں آئے تو ایران سے بہت تنازعات والا معاملہ تھا، ایران کے ساتھ جوہری معاہدہ بدترین تھا۔

ٹرمپ سے جب یہ پوچھا گیا کہ کیا وہ ایرانی صدر حسن روحانی سے بات چیت کے لیے تیار ہیں تو انہوں نے کہا کہ جی ہاں بالکل میں مذاکرات کرنا چاہوں گا۔

مزید پڑھیں: جنگ اور بات چیت کا کوئی باہمی میل نہیں، ایران کا امریکا کو جواب

واضح رہے کہ امریکی صدر ٹرمپ نے دو روز قبل برطانوی وزیراعظم تھریسامے کے ہمراہ مشترکہ پریس کانفرنس میں کہا تھا کہ امریکا اور برطانیہ یقینی بنائیں گے کہ ایران جوہری ہتھیار تیار نہ کرسکے۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف نے کہا تھا کہ جنگ اور بات چیت کا کوئی باہمی میل نہیں، امریکی پابندیاں درحقیقت ایران کے خلاف اقتصادی دہشت گردی ہے۔

خیال رہے کہ دو روز قبل ایران کی وزارت خارجہ کے ترجمان سید عباس موسوی نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ چین اور امریکا کے درمیان موجودہ تجارتی جنگ، دونوں ملکوں کے دو طرفہ تعلقات کی سطح سے بھی اوپر پہنچ سکتی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں