The news is by your side.

Advertisement

ترکی کا مسئلہ کشمیر پر پاکستان کے ساتھ کھڑے رکھنے کا عزم

انقرہ: ترک پارلیمنٹ کے اسپیکر مصطفیٰ سینٹوپ نے کہا ہے کہ کشمیر کے مسئلے پر پاکستان کا ساتھ دینا ترکی کی ذمہ داری ہے۔

تفصیلات کے مطابق ترک پارلیمنٹ سے خطاب کرتے ہوئے اسپیکر مصطفی سینٹوپ نے کہا کہ ہم مسئلہ کشمیر پر پاکستان کے شانہ بشانہ کھڑے ہیں اور ترکی اس مسئلے پر پاکستان کے ساتھ کھڑا ہونا اپنی ذمہ داری سمجھتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ترک قوم جنگ آزادی کے دوران ہندوستانی مسلمانوں کی مدد کو نہیں بھول سکی اور نہ ہم نے اس دوستی کو بھلایا ہے۔

ترک اسپیکر کا کہنا تھا کہ بھارت نے 5 اگست سے مقبوضہ کشمیر میں کرفیو لگا رکھا ہے اور وہاں پرانسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیاں ہورہی ہیں۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ مقبوضہ کشمیر میں سیکڑوں لوگوں کو مسائل کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے، اور پوری سیاسی قیادت کو قید کررکھا ہے۔

خیال رہے کہ ترک صدر رجب طیب اردوان نے بھی مسئلہ کشمیر پر اقوام متحدہ میں آواز بلند کی تھی اور عالمی برادری پر دباؤ ڈالا تھا کہ وہ مسئلہ کشمیر کے لیے فعال کردار ادا کرے۔

پاکستان اور بھارت میں ایٹمی جنگ ہوئی توکروڑوں افراد مارے جائیں گے، امریکی جریدے

واضح رہے کہ مقبوضہ کشمیر میں آج مسلسل 60 ویں روز بھی کرفیو برقرار ہے اور مواصلات کا نظام مکمل پر معطل ہے، قابض انتظامیہ نے ٹیلی فون سروس بند کررکھی ہے جبکہ ذرائع ابلاغ پرسخت پابندیاں عائد ہیں۔

کشمیرمیڈیا سروس کے مطابق مواصلاتی نظام کی معطلی، مسلسل کرفیو اور سخت پابندیوں کے باعث لوگوں کو بچوں کے لیے دودھ، زندگی بچانے والی ادویات اور دیگر اشیائے ضروریہ کی شدید قلت کا سامنا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں