The news is by your side.

Advertisement

ترک صدر کے اختیارات میں اضافے کےلیے ریفرنڈم کا اعلان

انقرہ : ترک صدر کے اختیارات میں اضافے کے حوالے سے رواں سال اپریل میں ریفرنڈم ہوگا،جس کے بعد صدر کے پاس وزراکی تقرری کا بھی اختیار ہوگا۔

تفصیلات کےمطابق ترک صدر رجب طیب اردگان کے اختیارات میں اضافے کے حوالے سے رواں سال 16اپریل کو ریفرنڈم کرایاجائےگا،جس کے بعد وہ بہت سے قوانین سے متعلق حکم جاری کرسکیں گے۔

رجب طیب اردگان نےجمعے کےروزاصلاحات کے بل پر دستخط کیے تھے جس سے رائے شماری کی راہ ہموار ہو گئی ہے۔صدر کے پاس نئی اصلاحات کی منظوری کے بعد نئے اختیارات ہوں گے جن کے تحت وہ وزرا کا تقرر کر سکیں گے۔

ترک صدر کا کہنا ہے کہ یہ تجویز کردہ اصلاحات ترکی کو مزید مستحکم کرنے میں مدد دیں گے تاہم ناقدین صدر پر آمرانہ رویے کا الزام لگا رہے ہیں۔

مقامی میڈیا کےمطابق اس بل میں یہ بھی تجویز دی گئی ہے کہ ملک میں پارلیمانی اور صدارتی انتخابات ایک ہی وقت میں منعقد ہوں گے جس کے لیےممکنہ تاریخ تین نومبر 2019 ہے۔

مزید پڑھیں:صدر کے اختیارات میں توسیع‘ترک پارلیمنٹ نے منظوری دے دی

یاد رہےکہ گزشتہ ماہ ترک پارلیمنٹ نےصدر کے اختیارات بڑھانے سے متعلق نئے قانون کی منظوری دے دی تھی۔

واضح رہےکہ نئی اصلاحات کے تحت ملک کے وزیراعظم کا عہدہ موجودہ وزیراعظم بن علی یلدرم کے بجائے کسی اور شخصیت کے پاس جائے گا یا پھر اس عہدے کے جگہ نائب صدر لیں گے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں