The news is by your side.

Advertisement

ترکی نے پناہ گزین بچوں کے چہروں پر خوشیاں بکھیر دیں

انقرہ: ترکی نے انسانی ہمدری کی نئی مثال قائم کرتے ہوئے شامی پناہ گزین بچوں کے چہروں پر خوشیاں بکھیر دیں۔

تفصیلات کے مطابق شام میں ملکی فوج اور باغیوں کے درمیان جنگ سے متاثرہ پناہ گزینوں کی مدد کے لیے ترکی کے خیراتی ادارے انسانی ہمدری کے تحت بچوں میں کھلونے تقسیم کررہے ہیں۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق شامی خطے سے منسلک ترکی بارڈر پر عارضی طور پر مہاجرین کے کیمپس لگائے گئے ہیں جہاں زورانہ کی بیناد پر بچوں میں کھلونے تقسیم کیے جارہے ہیں جس کا مقصد بچوں میں امن اور جنگی خیالات کا انخلا یقینی بنایا ہے۔

خیال رہے کہ شام میں جاری جنگ کے باعث پناہ گزینوں کا مسئلہ بھی سنگین ہوتا جارہا ہے جس کے پیش نظر خیراتی ادارے نے شامی شہر ادلب کے محفوظ علاقے میں گھروں کی تعمیر کا فیصلہ کیا ہے جہاں تقریباً 1 ہزار متاثرہ خاندان رہ سکیں گے۔

ادارے کا کہنا تھا کہ جنگی صورت حال کے پیش نظر تقریباً 3 لاکھ شامی شہری ترکی منتقل ہوچکے ہیں۔ مستقل بنیادوں پر گھروں کی تعمیر کا مقصد مہاجرین کے مسئلے پر قابو پانا ہے۔

خیراتی ادارے نے یہ بھی کہا ہے کہ مہاجرین کی مدد کے لیے ہرممکن اقدامات کیے جارہے ہیں، سردیوں سے بچنے کے لیے گرم کپڑوں سمیت ادویات اور ضروری اشیاء بھی فراہم کی جارہی ہیں۔

اقوام متحدہ کی ایک رپورٹ کے مطابق جنگ کے باعث شام میں لاکھوں افراد بے گھر ہوئے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں