The news is by your side.

Advertisement

غیر ملکی سرمایہ کاری میں 20 کروڑ ڈالر کمی

کراچی: پاکستان اسٹاک مارکیٹ اور ملکی زرمبادلہ کے ذخائر سے امریکی ڈالر کا انخلا بڑھ گیا، غیرملکی سرمایہ کاروں نے شیئرز فروخت کردیے جس کے باعث زر مبادلہ کے ذخائر مسلسل کم ہونے لگے، غیر ملکی سرمایہ کار وں نے 5 ماہ میں 20 کروڑ امریکی ڈالر کا سرمایہ مارکیٹ سے نکال لیا۔

این سی سی پی ایل کےجاری کردہ ڈیٹا کے مطابق رواں سال جنوری سے اپریل کے دوران غیر ملکیوں نےماہانہ اُوسطاً 5 ارب روپےکےشئیرز فروخت کیے اور  20 کروڑ امریکی ڈالر کے حساب سے سرمایہ مارکیٹ سے نکال لیا۔

اسٹیٹ بینک سے جاری کردہ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ جنوری تا اپریل ملکی زرمبادلہ کے ذخائر میں ماہانہ اُوسطاً 50 کروڑ ڈالر کی کمی ریکارڈکی گئی، چارماہ میں پاکستان کےڈالر ریزرو 23 ارب 16 کروڑ ڈالر سےکم ہوکر 21 ارب 15 کروڑ ڈالر رہ گئے۔

غیرملکی سرمایہ کار 4 ماہ کےدوران بینکس سے بھی اپنا پیسہ نکالنےمیں پیش پیش رہے۔

جنوری تا اپریل بینکوں نے شئیر مارکیٹ سے ماہانہ سوا دو ارب روپے نکال لیے تاہم مقامی فنڈز اور سرکاری مالیاتی ادارں کی سرمایہ کاری نے شئیر مارکیٹ کو گرنے سے بچالیا اور جنوری سے اپریل کے دوران 22 ارب روپے کے شئیرز خرید لیے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں