The news is by your side.

Advertisement

ٹوئٹر نے 3 لاکھ اکاؤنٹ بند کردیے

نیویارک : سماجی رابطے کی مشہور ویب سائٹ ٹوئٹر نے دنیا بھر کے ممالک کی جانب سے آن لائن دہشت گردی کے خلاف جنگ کے دباؤ کے نتیجے میں 3 لاکھ اکاؤنٹ بند کر دیے۔

ٹویٹر کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ کمپنی نے دہشت گردی کے خلاف جنگ کو موثر بنانے کے لیے اپنی ویب سائٹ کے ایک ٹول کو مزید بہتر کیا ہے جس نے دنیا بھر میں پھیلے دہشت گردوں یا ان کے سہولت کاروں کے زیرِاستعمال 3 لاکھ اکاؤنٹ بند کرنے میں زبردست مدد فراہم کی اور تقریباً 95 فیصد اکاؤنٹ اسی ٹول کی مدد سے بند کیے گئے۔

سوشل میڈیا پر بلاتصدیق پوسٹ سے انتہا پسندی پھیل رہی ہے*

سماجی رابطے کی ویب سائٹ کے مطابق دہشت گردی کے خلاف برسرِ پیکار حکومتوں کی جانب سے دیے جانے والے ڈیٹا بیس میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے‘ جس کے سبب اس عفریت پر قابو پانے میں مدد ملی ہے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ انتہا پسندی کے خلاف جنگ میں اس نئے ٹول کا استعمال انتہائی ضروری ہے کیونکہ روزانہ کی بنیاد پر لاکھوں کی تعداد میں پیغامات کو پڑھنا ایک نا ممکن عمل ہے۔

یاد رہے کہ ٹویٹر کے اس وقت پوری دنیا میں 32 کروڑ 80 لاکھ صارفین موجود ہیں جن میں سے تقریباً 6 کروڑ 80 لاکھ صارفین صرف امریکا میں ہیں۔


اگر آپ بلاگر کے مضمون سے متفق نہیں ہیں تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اوراگرآپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پرشیئرکریں

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں