کراچی، زیر تعمیر انڈر بائی پاس میں ڈوب کر دو بچے جاں بحق under-by-pass
The news is by your side.

Advertisement

کراچی، زیر تعمیر انڈر پاس میں ڈوب کر دو بچے جاں بحق

کراچی : پنجاب چورنگی پر زیر تعمیر انڈر پاس میں 2 بچے ڈوب کر جاں بحق ہو گئے، لاشوں کو نکال لیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق باران رحمت جہاں خوشگوار موسم کی نوید بن کر اہالیان کراچی پر برسی ہے وہیں بد انتظامی اور حکومتی اداروں کی نااہلی کے باعث زحمت کا باعث بھی بنی اور کچھ گھرانوں پر غم کا پہاڑ بن کر ٹوٹی۔

پنجاب کالونی میں زیر تعمیر انڈر بائی پاس میں بارش کا پانی بھرنے کے باعث بچے وہاں نہا رہے تھے کہ پانی سطح بلند ہو گئی اور دو بچے آناً فاناً ڈوب گئے۔

ریسکیو اداروں نے واقعہ کی اطلاع ملتے ہی جائے حادثہ کا رخ کیا اور امدادی کاموں کا آغاز کرتے ہوئے غوطہ خوروں نے لاشوں کی تلاش کا کام شروع کیا اور ڈوبنے والے دونوں بچوں کی لاشیں نکال لیں۔

ریسکیو ذرائع کے مطابق ڈوب کر ہلاک ہونے والے ایک بچے کی شناخت آفتاب احمد کے نام سے ہوئی ہے جو کہ تیسری جماعت کا طالب علم تھا اور بارش کا لطف لینے گھر سے دوستوں کے ہمراہ نکلا تھا تاہم زندگی نے وفا نہیں کی۔

ریسکیو ذرائع کے مطابق ڈوبنے والے دوسرے بچے کی شناخت اب تک نہیں ہوسکی اور اس کے ورثا کی تلاش کا کام جاری ہے۔

علاقہ مکینوں کا کہنا ہے کہ حادثہ انڈر بائی پاس تعمیر کرنے والے ادارے کی غفلت کی وجہ سے پیش آیا کیوں کہ زیر تعمیر انڈر بائی پاس کے ارد گرد حفاظتی حصار نہیں اور نہ ہی اس کی نشاندہی کے لیے کوئی سائن بورڈ نصب کیا گیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں