The news is by your side.

Advertisement

دو بھارتی کھلاڑی قانون کی خلاف ورزی پر کامن ویلتھ گمیز سے باہر

برسلز: کامن ویلتھ گیمز میں قانون کی خلاف ورزی کرنے پر دو بھارتی کھلاڑیوں کو کامن ویلتھ فیڈریشن نے مقابلوں سے باہر کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق آسٹریلیا کے شہر گولڈ کوسٹ میں جاری کامن ویلتھ گیمز میں دو بھارتی ایتھلیٹس کو اس وقت مقابلوں سے باہر کیا گیا کہ جب انہوں نے ’نو نیڈل‘ پالیسی کی خلاف ورزی کرتے ہوئے سرنج کا استعمال کیا۔

کامن ویلتھ فیڈریشن کے مطابق دوڑ کے مقابلوں میں بھارت کی نمائندگی کرنے والے عرفان کولوتھم تھوڈی اور ٹرپل جمپنگ کے مقابلوں میں حصہ لینے والے راکیش بابو کے کمروں سے سرنج بر آمد ہونے پر انہیں مقابلوں سے نکالا گیا ہے۔

کامن ویلتھ گیمز: پاکستان کے ایک اور ہونہار سپوت نے میڈل اپنے نام کر لیا

فیڈریشن کے صدر لیوس مارٹن کا کہنا تھا کہ فیڈریشن کورٹ نے دونوں کھلاڑیوں کو قصور وار قرار دیا جبکہ دونوں ایتھلیٹس کی جانب سے سرنج رکھنے یا اس کی معلومات سے متعلق اعترف جرم کرنے سے انکار کیا ہے۔

صدر لیوس مارٹن کا مزید کہنا تھا کہ ہوٹل کے عملے نے راکیش بابو اور عرفان تھوڈی کے کمرے کی صفائی کے دوران انجکشن بر آمد کیا جبکہ آسٹریلین اسپورٹس اینٹی ڈوپنگ اتھارٹی کے حکام نے بھی راکیش بابو کے بیگ کی تلاشی کے دوران سرنج بر آمد کی۔

کامن ویلتھ گیمز: ایک اور میڈل پاکستان کے نام

خیال رہے کہ کامن ویلتھ گیمز فیڈریشن کی جانب سے ٹرپل جمپر راکیش اور ریس واکر عرفان کولو تھم تھودی کے اجازت نامے منسوخ کر دیے گئے ہیں اور انہیں پہلی دستیاب فلائٹ سے اپنے ملک واپس جانے کے لیے بھی کہا جاچکا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں