The news is by your side.

Advertisement

امریکہ کی شام میں بمباری،80فوجی جاں بحق

ماسکو: روسی آرمی کا کہنا ہے کہ جنگ زدہ شام کے مشرقی علاقے میں واقع ایئر بیس پر امریکی اتحادی طیاروں کے فضائی حملوں میں 80 سے زائد شامی حکومتی فوجی جاں بحق اور متعدد زخمی ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق روسی فوج کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا کہ امریکی اتحاد کی جانب سے، ڈیرایزور ایئر بیس میں داعش کے جنگجوؤں سے گِھری ہوئی شامی فورسز کے خلاف 4 فضائی حملے کیے گئے۔

بیان میں کہا گیا کہ فضائی حملے شام کے پڑوسی ملک عراق سے آنے والے ایف سولہ اور اے ٹین جیٹ طیاروں نے کیے،جس کے نتیجے میں80 شامی فوجی جاں بحق اور متعدد زخمی ہوئے۔

امریکی فضائی حملوں کے جواب میں داعش کی جانب سے بھی کارروائی کی گئی،جس کے بعد دہشت گردوں کے خلاف شدید لڑائی کا آغاز ہوگیا۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ اگر امریکا کی جانب سے یہ فضائی کارروائی ہدف کو نشانہ بنانے میں کسی غلطی کا نتیجہ ہے تو اس کے براہ راست اثرات ہوں گے۔

مزید پڑھیں: امریکی فضائی حملے میں داعش کا وزیراطلاعات ہلاک

شامی فوج گزشتہ ایک سال سے حملے کا نشانہ بننے والی ایئربیس کے اطراف میں واقع داعش کے ٹھکانوں کے خلاف کارروائی کر رہی ہے۔

یاد رہے کہ امریکہ اور روس کے درمیان چند روز قبل ہی شام میں جنگ بندی کا معاہدہ طے پایا تھا،جو اس حملے کی وجہ سے صرف 5 روز تک جاری رہا۔

واضح رہے کہ روسی فوج کی جانب سے پہلے ہی کہا جاچکا ہے کہ اگر جنگ بندی کا معاہدہ ختم ہوا توا اس کا ذمہ دار امریکا ہوگا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں