The news is by your side.

Advertisement

روس نے امریکی صدارتی انتخابات میں مداخلت کی تھی‘ امریکی سینیٹ کا دعویٰ

واشنگٹن: امریکی سینیٹ نے دعویٰ کیا ہے کہ روس نے 2016 میں ہونے والے امریکی صدارتی انتخابات میں مداخلت کی تھی۔

تفصیلات کے مطابق امریکی سینیٹ کی انٹیلی جنس کمیٹی نے اب پہلی بار کھل کر کہہ دیا ہے کہ روس نے امریکا میں ہوئے گذشتہ صدارتی انتخابات میں مداخلت کی تھی۔

امریکی میڈیا کی ایک رپورٹ کے مطابق روس پر 2016 کے بعد سے ہی یہ الزام لگایا جاتا رہا ہے کہ ماسکو نے امریکا کے ان صدارتی انتخابات میں مداخلت کی تھی، جن کے نتیجے میں کاروباری شخصیت ڈونلڈ ٹرمپ صدر منتخب ہوئے تھے۔


امریکی صدارتی انتخابات میں روسی مداخلت کا معاملہ، ٹرمپ کے وکیل کا اہم بیان سامنے آگیا


سینیٹ انٹیلی جنس کمیٹی نے امریکی خفیہ اداروں کے اس موقف کی کھل کر تائید کی ہے کہ روس نے دو سال پہلے ہونے والے امریکی صدارتی انتخابات میں اس لیے مداخلت کی تھی کہ ڈونلڈ ٹرمپ کی مدد کی جاسکے اور وہ اپنے مقصد میں کامیاب ہوئے۔

خیال رہے کہ انتخابی سیاست کی سطح پر ٹرمپ اور روس کے روابط سے متعلق امریکی سینیٹ کا یہ موقف ایک ایسے وقت پر سامنے آیا ہے، جب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور ان کے روسی ہم منصب ولادی میر پوٹن کی سربراہی ملاقات میں چند ہی روز باقی رہ گئے ہیں۔


امریکی صدارتی انتخاب میں روسی مداخلت، تحقیقات میں پہلی فرد جرم کی منظوری


یاد رہے کہ نومبر 2016 میں ہونے والے صدارتی انتخابات سے قبل ماہ اکتوبر میں امریکی حکومت نے روس پر ڈیموکریٹک پارٹی پر سائبر حملوں کا الزام عائد کیا تھا۔

واضح رہے کہ سابق امریکی صدر باراک اوباما بھی اس عزم کا اظہار کر چکے ہیں کہ امریکی صدارتی انتخابات میں مبینہ مداخلت کرنے پر روس کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں