The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب کی حفاظت کے لیے امریکا کا مزید فوجی دستے بھیجنے کا اعلان

واشنگٹن: ایران اور حوثی باغیوں سے خطرات کے پیش نظر امریکا نے سعودی عرب کی حفاظت کے لیے مزید فوجی دستے بھیجنے کا اعلان کردیا۔

تفصیلات کے مطابق سعودی عرب کی حفاظت کو مزید مضبوط بنانے کے لیے اضافی 3 ہزار فوجی اہلکار تعینات کیے جائیں گے، تاکہ کسی بھی ممکنہ خطرات سے نمٹا جاسکے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکی جانب سے یہ اقدام سعودی آئل فیکٹروں پر حملے کے بعد سامنے آیا۔ سعودی عرب کو حوثی باغیوں کی طرف سے میزائل حملوں کا بھی سامنا رہتا ہے۔

امریکی حکام کا کہنا ہے کہ مئی سے خطے میں جاری کشیدگی کے پیش نظر سعودی عرب میں اضافی تین ہزار امریکی فوجیوں اور دو ٹرمینل ہائی الٹیٹیوڈ ایریا ڈیفنس سسٹم تھاڈ بیٹریز بھیجنے کا فیصلہ کیا ہے۔

آئندہ چند ہفتوں میں امریکی فوج کی سعودی عرب روانگی کا عمل شروع ہوجائے گا، جس کے بعد سعودی عرب میں تعینات کیے جانے والے امریکی فوجیوں کی مجموعی تعداد چودہ ہزار کے قریب ہوجائے گی۔

فرانسیسی صدر کا سعودی ولی عہد سے رابطہ، تیل فیکٹری پر حملوں کی شدید مذمت

یاد رہے کہ رواں سال ستمبر میں دو دھماکہ خیز ڈرونوں نے حملہ کرکے وسطی سعودی عرب میں ارامکو کی آئل پائپ لائن کے دو بڑے اسٹیشنوں میں آگ لگا دی تھی، اس آئل فیلڈ سے پائپ لائن کے ذریعے بحر احمر کے ساحل کے مغرب میں تیل سپلائی کیا جاتا ہے۔

آئل تنصیبات پر حملے کے فوری بعد سعودی فرمانروا شاہ سلمان کا ردِ عمل سامنے آیا تھا جس میں ان کا کہنا تھا کہ تنصیبات پر حملے سے عالمی امن کے لئے خطرات پیدا ہوگئے ہیں، سعودی عرب آئل تنصیبات اور علاقے کا بھرپور دفاع کرے گا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں