The news is by your side.

Advertisement

متحدہ عرب امارات: کار سوار پر لاکھوں درہم کا جرمانہ۔۔۔مگر کیوں؟

ریاض: متحدہ عرب امارات میں عدالت نے کار ڈرائیور کو حکم دیا کہ وہ انشورنس کمپنی کو 4 لاکھ 96 ہزار 429 درہم ہرجانے کے طور پر ادا کرے۔

تفصیلات کے مطابق متحدہ عرب امارات میں ڈرائیور نے نشے میں ڈرائیونگ کے دوران ایک شخص کو ہلاک کر دیا تھا،ٹریفک حادثے میں ایک زخمی اور گاڑی تباہ ہوگئی تھی۔انشورنس کمپنی نے ڈرائیور کی طرف سے رقم ہرجانے کے طور پر ادا کی تھی۔

بعدازاں انشورنس کمپنی نے عدالت سے رجوع کر کے ڈرائیور کے خلاف مقدمہ درج کروایا تھا۔کمپنی کا کہنا تھا کہ اسے ڈرائیور سے 5 لاکھ 24 ہزار درہم دلائے جائیں اور مقدمے کے اخراجات بھی ڈرائیور سے وصول کیے جائیں کیونکہ اس نے ٹریفک حادثہ نشے کی حالت میں کیا تھا۔

انشورنس کمپنی نے ڈرائیور سے مطلوب ہرجانہ کار کی مالک متاثرہ کمپنی کو 28 ہزار درہم کی صورت میں ادا کیے۔متوفی کے ورثا کو 3 لاکھ 72 ہزار 910 درہم اور زخمی کو ایک لاکھ 23 ہزار 519 درہم کی ادائیگی کی۔

ابوظبی پرائمری کورٹ نے ڈرائیور کے خلاف فیصلہ دیتے ہوئے کہا کہ وہ انشورنس کمپنی کو 4 لاکھ 96 ہزار 429 درہم ادا کرے۔عدالت نے مقدمے کے اخراجات بھی ڈرائیور کو ادا کرنے کا حکم دیتے ہوئے کمپنی کے دیگر مطالبات مسترد کر دیے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں