The news is by your side.

Advertisement

متحدہ عرب امارات نے ایرانی کمپنیوں پر پابندی عائد کردی

ابوظہبی : متحدہ عرب امارات کی وفاقی کابینہ نے قراد داد پاس کی ہے، جس کے ذریعے سپاہ پاسداران کو مالی مدد فراہم کرنے والی نو ایرانی کمپنیوں اور افراد پر پابندی عائد کردی گئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق متحدہ عرب امارات کی مرکزی کابینہ نے گذشتہ روز ایک قرار داد منظور کی ہے جس کے تحت ایران کی دہشت گرد تنظیموں کو مدد فراہم کرنے اداروں اور افراد کے خلاف کارروائی کی گئی ہے۔

غیر ملکی خبر رساں اداروں کا کہنا تھا کہ متحدہ عرب امارت کی وفاقی حکومت نے ایرانی شہریوں اور کمپنیوں کی فہرست تیار کی ہے جن میں سے 9 کمپنیوں اور افراد پر دہشت گردی اور دہشت گردوں کی حمایت کے الزام میں پابندی لگادی گئی ہے۔

غیر ملکی میڈیا کا کہنا تھا کہ عرب ریاستوں نے ایران سے تعلق رکھنے والے اداروں اور سپاہ پاسداران کے ساتھ تعاون کرنے والوں کا نیٹ ورک ٹورنے کے لیے مذکورہ پابندیاں عائد کی ہے۔

غیر ملکی میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے متحدہ عرب امارات کے حکام کا کہنا تھا کہ جن نو کمپنیوں اور شہریوں پر پابندی لگائی ہے وہ ایران کی سپاہ پاسداران کو کروڑوں امریکی ڈالرز فراہم کرتے تھے تاکہ وہ علاقائی پراکسی وار اور منفی سرگرمیوں میں اس رقم کو استعمال کرسکیں۔

یو اے ای حکام کا کہنا تھا کہ ایران کے سپاہ پاسداران کی مدد کرنے والے اداروں اور افراد کے خلاف امریکا کے ساتھ مل کر کارروائی کی گئی ہے۔

دوسری جانب امریکا کی وزیر خزانہ اسٹون مونچن کا کہنا تھا کہ مذکورہ کمپنیوں اور افراد پر متحدہ عرب امارات کے ساتھ مل کر پابندی عائد کی گئی ہے جس کے بعد کسی بھی کمپنی یا ملک کو جرت نہیں ہوگی کہ وہ ایران کے ساتھ تعلق رکھے۔

امریکی وزیر خزانہ کا اپنے ایک بیان میں کہنا تھا کہ ایرانی حکومت اور ایران کے سرکاری بینک نے متحدہ عرب امارات کے اداروں تک رسائی حاصل کرنے کی کوشش کی تاکہ سپاہ پاسداران اور خطے میں منفی سرگرمیاں انجام دینے والے ایرانی حمایت یافتہ گروہوں کو ڈالرز اور اسلحے کی صورت میں مدد پہنچائی جاسکے۔


امریکی صدر ٹرمپ کا ایران سے جوہری معاہدہ ختم کرنے کا اعلان


یاد رہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے 9 مئی کو ایران سے جوہری معاہدہ ختم کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا تھا کہ ایران پر سخت پابندیاں لگائیں گے، ایران سے جوہری تعاون کرنے والی ریاست پر بھی پابندیاں لگائیں گے۔


ڈونلڈ ٹرمپ نےجوہری معاہدے سے نکل کرغلطی کردی‘ آیت اللہ علی خامنہ ای


 ایران کے رہبراعلیٰ آیت اللہ علی خامنہ ای نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے جوہری معاہدے سے نکل کرغلطی کردی ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں