The news is by your side.

عرب امارات میں نیا تعلیمی سال، حکام کی ہدایات جاری

ابو ظہبی: متحدہ عرب امارات میں نیا تعلیمی سال شروع ہوگیا، اس حوالے سے حکام نے طلبہ اور تعلیمی عملے کے لیے ہدایات جاری کردیں۔

بین الاقوامی ویب سائٹ کے مطابق متحدہ عرب امارات میں نئے تعلیمی سال 2023-2022 کے حوالے سے کرونا وائرس کی نئی ہدایات جاری کی گئی ہیں۔

وزارت تعلیم کے ترجمان ھزاع المنصوری کا کہنا ہے کہ نئے تعلیمی سال کے حوالے سے تعلیمی اداروں میں نیا پروٹوکول نافذ ہوگا۔

12 برس اور اس سے زیادہ عمر کے طلبہ نیز تعلیمی و انتظامی عملے کو پی سی آر ٹیسٹ رپورٹ پیش کرنا ہوگی، تعلیمی سال کے پہلے دن سے 96 گھنٹے کے اندر اس کا نمونہ لیا گیا ہو۔

اس کے بعد طلبہ سے پی سی آر ٹیسٹ طلب کیا جائے گا اور نہ انتظامی و تعلیمی عملے کو اس کا پابند بنایا جائے گا۔

امارات کی وزارت تعلیم نے تعلیمی اداروں میں طلبہ پر ماسک کی پابندی برقرار رکھی ہے جبکہ اسکولوں اور بسوں میں سماجی فاصلے کی پابندی منسوخ کردی ہے، طلبہ اور عملے کا ٹمپریچر بھی چیک نہیں کیا جائے گا۔

وزارت نے یہ پابندی برقرار رکھی ہے کہ جس طالب علم یا عملے کا فرد ٹمپریچر بڑھا ہوا محسوس کرے وہ تعلیمی ادارے کا رخ نہ کرے۔ اس کے لیے بیماری کی چھٹی لینا ہوگی۔

وزارت تعلیم نے کرونا وائرس کے شکار طلبہ اور عملے کو آن لائن تعلیم اور ڈیوٹی کی سہولت برقرار رکھی ہے۔ ایسے طلبہ اور ملازمین کو بھی یہ سہولت مہیا ہوگی جو تنفس کے عارضے میں مبتلا ہوں، میڈیکل ٹیسٹ تک یہ سہولت رہے گی۔

وزارت تعلیم کا کہنا ہے کہ کرونا وائرس ٹیسٹ صرف اس صورت میں لیا جائے گا جب اس کی علامتیں نظر آرہی ہوں، امارات نے تمام طلبہ کو اسکولوں میں حاضر ہونے کی اجازت دی ہے۔

یہ اجازت ان طلبہ کو بھی ہوگی جو صحت اسباب یا ویکسین سے استثنیٰ کے باعث ویکسین نہ لیے ہوئے ہوں۔

المنصوری نے کہا کہ آئندہ ہفتے سے نیا تعلیمی سال شروع ہو رہا ہے، 10 لاکھ سے زیادہ طلبہ اور 65 ہزار افراد پر مشتمل تعلیمی عملہ نئے تعلیمی سال کا حصہ ہوں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں