The news is by your side.

Advertisement

برطانیہ کا پناہ گزینوں سے متعلق نظام میں تبدیلی کا اعلان

لندن : برطانوی حکومت نے غیرقانونی تارکین وطن کا داخلہ روکنے کےلیے پناہ گزینوں سے متعلق نظام میں تبدیلی کا اعلان کردیا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق برطانوی وزیر داخلہ پریتی پٹیل کی جانب سے برطانیہ میں داخل ہونے والے غیر ملکی افراد کا داخلہ روکنے کےلیے پناہ گزینوں کا نظام تبدیل کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ نیا منصوبہ پناہ گزینوں کی ضرورت پر منحصر ہوگا نہ کہ انسانی اسمگلروں کے پیسہ کمانے پر۔

وزیر داخلہ کا کہنا ہے کہ نئے منصوبے کے تحت پناہ گزینوں کی شناخت کی جائے گی اور جنہیں ضرورت ہوگی صرف انہیں کو پناہ دی جائے گی اور ان لوگوں کو باہر نکالا جائے گا جو برطانیہ میں رہنے کا حق نہیں رکھتے۔

انہوں نے کہا کہ نظام میں ایسی تبدیلیاں کرنے کےلیے مختلف پیراہوں پر غور پر کررہے ہیں جس کے ذریعے ایسے لوگوں کو پناہ دیں جو خطرناک ممالک میں مظالم سہ رہے ہیں۔

پریتی پٹیل نے کہا کہ نظام میں تبدیلی میں سے ان لوگوں کی مدد کی جاسکے کی جو مظالم تلے دبے ہوئے ہیں اور غیرقانونی تارکین وطن کا راستہ رکے گا۔

برطانوی وزیر داخلہ نے مزید کہا کہ اگر لوگ غیر قانونی طور پر آ رہے ہیں تو انہیں وہ حقوق نہیں ملیں گے جو قانونی طریقے سے آنے والوں کو ملیں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں