The news is by your side.

Advertisement

برطانوی فوجی کمانڈو بھی روس سے لڑنے کیلئے یوکرین پہنچ گیا

لندن : برطانیہ کے سابق وزیر کا بیٹا اور ملکہ الزبتھ کے محافظ دستے کا اہلکار روسی فوج سے لڑنے کےلیے یوکرین چلا گیا۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق ملکہ برطانیہ کے محافظ دستے میں شامل فوجی کمانڈو بھی یوکرین جنگ کا حصّہ بننے کےلیے یوکرین روانہ ہوگیا۔

برطانوی فوجی نے اپنے والدین کے نام ایک پرچی چھوڑی کہ ‘وہ روسی فوجیوں سے لڑنے کےلیے یوکرین جارہا ہے اور یک طرفہ ٹکٹ لیکر مشرقی یورپ روانہ ہوگیا’۔

برطانوی فوجی کو راستے میں روکنے کی کوشش کی گئی تاہم 30 سالہ بین گرانٹ نے رکنے سے انکار کردیا۔

رپورٹ کے مطابق بین گرانٹ پانچ سال تک رائل میرینز میں کمانڈو رہ چکا ہے اور بین کی والدہ ہیلن گرانٹ برطانیہ کی ٹوری رکن پارلیمنٹ ہیں۔

میڈیا رپورٹس میں کہا گیا ہے کہ اگر برطانوی فوجی کو جنگ کے دوران گرفتار کرلیا گیا تو روس یوکرین جنگ میں برطانیہ کو بھی شریک قرار دے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں