The news is by your side.

برطانوی پارلیمنٹ میں نوڈیل بریگزٹ کو مسترد کرنے کا بل منظور

لندن: برطانوی پارلیمنٹ میں نوڈیل بریگزٹ کو مسترد کرنے کا بل منظور کرلیا گیا، دارالعوام میں صرف ایک ووٹ کے فرق سے بل منظور ہوا۔

تفصیلات کے مطابق برطانوی پارلیمنٹ نے ایک اور فیصلہ سنا دیا، بریگزٹ ڈیل کے ذریعے یورپ سے علیحدگی اختیار کیے جانے سے متعلق بل منظور کرلی گئی۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ دارالعوام میں بل کےحق میں تین سو تیرہ اور مخالفت میں تین سو بارہ ووٹ پڑے۔

اس بل کی منظوری سے برطانوی وزیراعظم تھریسامے کو نوڈیل بریگزٹ سے بچنے کیلیے یورپی یونین سے مزید وقت لینا ہوگا، جس سے بریگزٹ کی بارہ اپریل کی ڈیڈلائن میں توسیع کی جاسکے گی۔

یورپی یونین کے رہنماؤں نے خیال ظاہر کیا تھا کہ برطانیہ کا یورپی یونین سے کسی باقاعدہ معاہدے کے بغیر اخراج یا نو ڈیل بریگزٹ اب تقریباً یقینی ہو گیا ہے۔

بریگزٹ سے متعلق آج ہونے والا اجلاس برطانیہ کیلئے آخری موقع ہوگا

خیال رہے کہ گذشتہ روز یورپی پارلیمان کے بریگزٹ سے متعلقہ امور کے رابطہ کار گائی فیرہوفشٹٹ نے کہا تھا کہ آج (بدھ کو) ہونے والا پارلیمانی اجلاس برطانیہ کے لیے آخری موقع ہوگا کہ وہ یا تو بریگزٹ کے بارے میں پائے جانے والے جمود کو ختم کرے یا پھر نتائج کا سامنا کرنے کے لیے تیار رہے۔

بریگزٹ ڈیل نہ ہونے کے باعث ملک میں سیاست کے علاوہ معاشی بحران کی صورت حال پیدا ہورہی ہے، امریکی ڈالر اور یورو کے مقابلے میں برطانوی پاؤنڈ کی قدر میں صفر عشاریہ تین فیصد کمی نوٹ کی گئی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں