The news is by your side.

Advertisement

روس یوکرین تنازعہ : امریکہ نے چین کو خبردار کردیا

واشنگٹن : روس اور یوکرین کے درمیان جاری تنازعہ کے سلسلے میں امریکہ نے چین کو دھمکی دی ہے کہ اگر اس نے روس کا ساتھ نہ چھوڑا تو اسے سنگین نتائج کا سامنا کرنا ہوگا۔

امریکی حکام کی جانب سے کہا گیا کہ اگر یورپی یونین اور امریکہ یوکرین کی مدد کرتے ہیں اور دوسری طرف چین روس کی تو اس سے واضح ہوجائے گا کہ اس جنگ کے مزید بُرے نتائج سامنے آسکتے ہیں۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق وائٹ ہاؤس نے ایک ایسے وقت میں اپنا پیغام جاری کیا ہے کہ جب صدر بائیڈن کے قومی سلامتی کے مشیر چین کے سب سے سینیئر سفارت کار سے ملاقات کرنے والے ہیں۔

یہ بظاہر ایک حکمت عملی ہے جس کے تحت چین پر دباؤ ڈالا جائے گا تاکہ وہ روس کی جانب سے امداد کے مطالبے کی اطلاعات کی تصدیق یا تردید کرے۔

رپورٹ کے مطابق اس کا بڑا مقصد یہ بھی ہوسکتا ہے کہ صدر شی جن پنگ اپنی موجودہ پوزیشن کے فائدے اور نقصانات کو جانچیں، انہوں نے گزشتہ ہفتے ماسکو سے تعلقات کو "چٹان جتنا مضبوط” کہا تھا۔

بیجنگ میں سرمائی اولمپکس کے آغاز پر چینی صدر شی اور روسی صدر پیوتن نے کہا تھا کہ ان کے اتحاد کی کوئی حدود نہیں، فوجی امداد بھی اس اتحاد کا حصہ ہوسکتی ہے۔

مگر روسی مداخلت کے کچھ روز بعد چین نے برطانیہ امریکہ اور دیگر ممالک کی جانب سے یوکرینی فوج کو ہتھیار دینے کی مذمت کی اور کہا کہ اس سے صورتحال مزید خراب ہوگی۔

اگر امریکی انٹیلی جنس کے جائزے کو درست مان لیا جائے کہ بیجنگ واقعی روس کی فوجی امداد کرنے والا ہے تو اس سے بھی صورتحال مزید خراب ہوسکتی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں