The news is by your side.

Advertisement

کوئلے سے چلنے والے بجلی گھر بند کیے جائیں، اقوام متحدہ

جینیوا : اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گُتیریس نے سات ترقی یافتہ ممالک کے گروپ ( جی سیون ممالک) سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ جون کے سربراہی اجلاس تک، کوئلے سے بجلی پیدا کرنے کے خاتمے کے اپنے اپنے منصوبوں کا اعلان کریں۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق وہ گزشتہ روز ایک آن لائن کانفرنس سے خطاب کر رہے تھے۔ اس اجلاس کا اہتمام، کوئلے سے بجلی کی پیداوار کے خاتمے اور ماحول دوست توانائی کی جانب منتقلی کے فروغ کی ایک تنظیم نے کیا تھا۔

انتونیو گُتیریس نے اس بات کو دہرایا کہ حکومتوں کی جانب سے کاربن ڈائی آکسائیڈ کے اخراج میں کمی کے لیے کیے گئے وعدے، 2010 کے مقابلے میں2030 تک اخراج میں45 فیصد کمی کے اقوام متحدہ کے ہدف سے کم ہیں۔

انہوں نے کہا کہ بجلی کی پیداوار کے شعبے میں کوئلے کے استعمال کا خاتمہ اس ہدف کو حاصل کرنے کے لیے واحد ضروری اقدام ہے۔

اقوام متحدہ کے سربراہ نے جی سیون ممالک پر زور دیا کہ وہ زیادہ سے زیادہ برطانیہ میں ہونے والے سربراہی اجلاس میں، کوئلے کے استعمال کے بتدریج خاتمے کے عزم کے وعدے کریں۔

انہوں نے صنعتی ممالک سے یہاں تک کہا کہ وہ کوئلے سے چلنے والے بجلی گھروں کی تعمیر، خصوصاً ترقی پذیر ممالک میں ان کے قیام کے لیے بین الاقوامی سرمایہ کاری بھی روکیں۔

راست منتقلی کی اصطلاح استعمال کرتے ہوئے انتونیو گُتیریس نے بجلی کی پیداوار کی ماحول دوست طریقے پر منتقلی کے عمل دوران، کوئلے سے چلنے والے بجلی گھروں کے کارکنوں کے حقوق کے تحفظ کی اہمیت پر بھی زور دیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں