The news is by your side.

Advertisement

مقبوضہ کشمیر سات دہائیوں سے بدترین انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کا شکار ہے: اقوام متحدہ

مسئلہ کشمیر تشدد کے بجائے بامعنی مذاکرات سے حل کیا جائے: خصوصی رپورٹ

نیویارک: اقوام متحدہ نے مقبوضہ کشمیر سے متعلق تفصیلی رپورٹ جاری کی ہے، جس میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں ختم کرنے پر زور دیا گیا ہے.

تفصیلات کے مطابق اقوام متحدہ کے ہیومن رائٹس آفس کی اپنی نوعیت کی اولین رپورٹ میں‌ موقف اختیار کیا گیا ہے کہ مسئلہ کشمیر تشدد کو روک کر فقط بامعنی مذاکرات کے عمل سے حل ہو سکتا ہے۔

رپورٹ میں موقف اختیار کیا گیا کہ انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں پرعالمی تحقیقاتی کمیشن بنایا جائے.

رپورٹ کے مطابق مقبوضہ کشمیر سات دہائیوں سے بدترین انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کا شکار ہے، بھارتی فوج مقبوضہ کشمیرمیں تحمل کا مظاہرہ دکھائے.

اقوام متحدہ کی رپورٹ کے مطابق مقبوضہ کشمیرمیں عوام پر خطرناک ہتھیار پیلٹ گنز کا استعمال ہورہا ہے، پیلٹ گنز سے جولائی 2016 سے اب تک ہزاروں شہری نابینا ہوئے، جولائی 2016 سے مارچ 2018 تک 145 کشمیری شہید کیے گئے.

رپورٹ میں‌ دعویٰ‌ کیا گیا کہ مقبوضہ کشمیرمیں گزشتہ 28 سال سے خصوصی آرمڈ فورسزایکٹ نافذ ہے، اب تک کسی بھارتی فوجی پرانسانی حقوق کی خلاف ورزی کا مقدمہ نہیں چل سکا، مقبوضہ کشمیرمیں رائج کالے قوانین غاصب فوجیوں کوفائدہ پہنچا رہے ہیں.


بھارتی آرمی چیف نے مقبوضہ کشمیر میں ناکامی کا اعتراف کرلیا


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں