The news is by your side.

Advertisement

بھارت:وائرل بخار کی تباہی، ہلاکتوں میں اضافہ

اترپردیش: بھارت میں وائرل بخار کے وار جاری ہے، جس کے باعث ہلاکتوں کی تعداد 114 تک جاپہنچی ہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق ریاست اتر پردیش کے ضلع فیروز آباد میں وائرل بخار نے پنجے گاڑھ لئے ہیں، گذشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران مہلک بخار سے مزید چار افراد لقمہ اجل بنے، جس کے بعد ہلاکتوں کی تعداد 114 ہوگئی ہے، جن میں 88 بچے بھی شامل ہیں۔

حکام نے مہلک بخار سے نمٹنے کے لئے احتیاطی تدابیر اختیار کرتے ہوئے اسپرے مہم اور رکے ہوئے پانی کی فوری نکاسی کا کام شروع کررکھا ہے، لیکن اس کے باوجود اموات کا سلسلہ جاری ہے۔

دوسری جانب مہلک بخار کی آڑ میں ضلع فیروز آباد کے نجی اسپتالوں نے شہریوں سے رقم ہتھیانا شروع کردی ہے، مہلک بخار سے متاثر ہونے والے بچے کے والد جو کہ ایک مزدور ہیں نے میڈیا کو بتایا کہ نجی اسپتال نے بیٹے کے علاج کے لئے تیس ہزار روپے ایڈوانس مانگے، رقم کے لئے کچھ وقت مانگا تو اسپتال والوں نے داخل کرنے سے انکار کردیا۔

یہ بھی پڑھیں: بھارت:دریائے گنگا میں دو کشتیوں میں خوفناک تصادم، متعدد ہلاکتیں

بعد ازاں فیروز آباد میڈیکل کالج لیکر گیا، جہاں بیڈ نے ہونے کے سبب انتظامیہ نے داخلے سے انکار کیا ، میں نے اسے آگرہ لے جانے کی کوشش کی لیکن راستے میں ہی اس کی موت ہوگئی۔

دوسری جانب فیروز آباد میڈیکل کالج کے چیف میڈیکل سپرنٹنڈنٹ ہنسراج سنگھ کا کہنا ہے کہ اس معاملے میں کوئی آفیشل شکایت نہیں کی گئی ہے، چیف میڈیکل افسر (سی ایم او) نے بتایا کہ ضلع میں مہلک بخار سے نمٹنے کے لئے چونسٹھ سرگرم کیمپ ہیں اور بخار والے لوگوں سمیت 4800 لوگوں کا وہاں علاج چل رہا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں