The news is by your side.

Advertisement

امریکا نے دولت اسلامیہ کو سوفیصد شکست دے دی: صدرٹرمپ

واشنگٹن: امریکی صدر دونلڈ ٹرمپ کا کہنا ہے کہ امریکا نے دولت اسلامیہ کو 100فیصد شکست دے دی، شام کے جن علاقوں میں ترکی حملہ کر ررہا وہاں امریکی فوج نہیں ہے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر جاری اپنے ایک بیان میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا کہنا تھا کہ داعش کو شکست دے کر ہم نے اپنا کام بخوبی مکمل کرلیا، اب ترکی کردوں پر حملہ کررہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ترکی اور کرد 200سال سے ایک دوسرے سے لڑ رہے ہیں، شام کے حوالے سے امریکا کے پاس 3آپشنز تھے، پہلا یہ تھا کہ ہم ہزاروں فوجی شام بھیجتے اور عسکری طور پر فاتح ہوتے۔

امریکی صدر کے مطابق دوسرا یہ آپشن تھا کہ ترکی پر سخت معاشی پابندیاں لگاتے، اور تیسرا آپشن یہ تھا کہ ترکی اور کردوں کے درمیان ثالثی کرواتے۔

ترکی کی شمالی شام میں مسلح گروپوں کے ٹھکانوں پر گولہ باری

خیال رہے کہ ترکی نے شام میں فوجی آپریشن کا فیصلہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے اپنی فوج کو وہاں سے بے دخل کرنے کے اچانک فیصلے کے فوری بعد کیا جبکہ ٹرمپ کے فیصلے کو واشنگٹن میں تنقید کا نشانہ بھی بنایا گیا۔

رپورٹ کے مطابق فوجی کارروائی کے حوالے سے ترک سیکیورٹی ذرائع کا کہنا تھا کہ شام میں فوجی آپریشن فضائی کارروائی سے شروع کیا گیا ہے اور اس میں بری فوج کا تعاون بھی حاصل ہوگا۔

ترک میڈیا کے مطابق راس العین میں بمباری کی گئی، طیاروں کے اڑنے کی آوازیں بھی سنی جاسکتی ہیں اور عمارتوں سے دھواں اٹھتا نظر آرہا ہے،شام میں فوجی کارروائی کے تازہ سلسلے پر متعدد ممالک کی جانب سے تشویش کا اظہار کیا جارہا ہے کہ اس سے خطے کے بحران میں اضافہ ہوگا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں