The news is by your side.

اوپن مارکیٹ میں ڈالر 8 سے 10 روپے مہنگا، اسٹیٹ بینک خاموش

کراچی : اوپن مارکیٹ میں ڈالر آٹھ سے دس روپے مہنگا فروخت ہونے لگا ، ماہرین کا کہنا ہے کہ اگر یہ سلسلہ جاری رہا تو بینکنگ چینلز کو بڑا نقصان ہوگا۔

تفصیلات کے مطابق اوپن مارکیٹ میں ڈالر آٹھ سے دس روپے مہنگا ہونے پر اسٹیٹ بینک خاموش ہے، فری مارکیٹ میں ڈالر227 روپے سے 229 روپے میں فروخت ہو رہا ہے۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ اگر یہ سلسلہ جاری رہا تو بینکنگ چینلز کو بڑا نقصان ہو سکتا ہے، غیر ممالک سے لوگ بینکنگ چینلز سے ڈالر بھیجنے کے بجائے ایکسچینج کمپنیوں کے ذریعے پیسے بھجنا شروع کر دینگے۔

فاریکس ڈیلز کا کہنا ہے کہ انٹر بینک میں ڈالر انسٹھ پیسے مہنگا ہو کر 219 روپے ستاون پیسے پر ٹریڈ کر رہا ہے۔

خیال رہے عالمی مالیاتی ادارے (آئی ایم ایف) سے پاکستان کو قرض ملنے کے باوجود روپے کے مقابلے میں امریکی ڈالر کی قیمت میں ایک ہفتے بعد دوبارہ اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔

یاد رہے کہ 31 اگست کو آئی ایم ایف کی جانب سے پاکستان کو قرض کی قسط موصول ہوئی تھی۔ اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے مطابق آئی ایم ایف 1.16 ارب ڈالر کی قسط موصول ہوئی۔

اسٹیٹ بینک کا کہنا تھا کہ اس سے زرمبادلہ کے ذخائر کو بہتر بنانے میں مدد ملے گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں