The news is by your side.

Advertisement

افغان صوبے ننگرہارمیں امریکی ڈرون حملہ، 30 شدت پسند ہلاک

کابل: افغانستان کے صوبے ننگرہارمیں امریکی ڈرون حملے کے نتیجے میں 30 شدت پسند ہلاک ہوگئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق ڈرون حملہ آج بروزاتوارعلی الصبح کیا گیا جس میں شدت پسندوں کے ٹھکانے کو نشانہ بنایا گیا ہے۔

افغان میڈیا ذرائع کا کہنا ہے کہ ننگرہارمیں افغان فورسز کی جانب سے آپریشن جاری ہے اورشدت پسندوں کو گھیرے میں لے لیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ دو روز سے طالبان دہشت گردوں کی کاروائیاں جاری ہیں جس میں 70 سے زائد افراد جاں بحق ہوگئے ہیں۔


افغانستان میں بم دھماکےاور شدت پسندوں کے حملے،70سےزائد ہلاک


گزشتہ روز بدترین دہشتگردی کاشکار رہا جہاں پے در پے بم دھماکوں اورامریکی فوجی بیس پرشدت پسندوں کےحملےمیں ہلاک ہونےوالوں کی تعداد پچاس سےزائد ہوگئی۔

دوسری جانب افغان صوبے قندوزمیں بھی خودکش کاربم دھماکےمیں 22 افرادہلاک ہوگئےجبکہ کابل میں دوبم دھماکوں کےبعد شدت پسندوں نےتیسراحملہ امریکی فوجی بیس پر کیا جس کے نتیجے میں ایک فوجی سمیت گیارہ افراد جان سے گئے۔

اس سے قبل ہونے والے خودکش حملے اورکار بم دھماکے میں 40 افراد لقمہ اجل بنے تھے۔

ملاعمرکی ہلاکت کی خبروں کی تصدیق کے بعد سے افغان حکومت اور طالبان کے درمیان جاری امن مذاکرات کا عمل معطل ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں