The news is by your side.

Advertisement

امریکا میں انسانی تباہی کا سبب ’گیم آف تھرونز‘

بیجنگ: چینی تھنک ٹینکس نے کہا ہے کہ امریکا میں کرونا وبا سے انسانی تباہی پھیلی لیکن حکام نے اسے سیاسی رنگ دیا، اصل میں یہ "گیم آف تھرونز” امریکا میں انسانی تباہی کا سبب بنا ہے۔

تفصیلات کے مطابق چین کے تین معروف تھنک ٹینکس سی آر آئی نے مشترکہ طور پر پیر کو ایک رپورٹ جاری کی ہے جس کا عنوان ہے امریکا نمبر ون ۔ انسداد وبا کے حوالے سے امریکا کی حقیقت۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ بلوم برگ نے حال ہی میں امریکا کو انسداد وبا میں سرفہرست ملک قرار دیا تھا، اس مضحکہ خیز دعوے کے جواب میں چین کے معروف تھنک ٹینکس نے مشترکہ رپورٹ جاری کی جس میں جامع تحقیق، درست اعداد و شمار اور معروضی اشاریوں کی بنیاد پر امریکا میں انسداد وبا کی حقیقی صورت حال دکھائی گئی ہے۔

رپورٹ میں نہ صرف ‘امریکا انسداد وبا میں سرفہرست’ کے پس پردہ حقائق کو بے نقاب کیا گیا ہے، بلکہ دنیا کو دکھایا گیا ہے کہ معصوم امریکی عوام کیسے "گیم آف تھرونز” کا شکار ہوئے ہیں۔

واضح رہے کہ امریکا میں کووڈ-19 کے مصدقہ کیسز کی تعداد 3 کروڑ 68 لاکھ سے تجاوز کر چکی ہے، اور اموات کی تعداد 6 لاکھ 34 ہزار سے زائد ہو چکی ہے، اور امریکا دونوں لحاظ سے دنیا میں سرفہرست ملک ہے۔

امریکی ادارے سی ڈی سی کے سابق سربراہ ولیم فاؤج نے ملکی پالیسیوں پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا تھا کہ یہ ایک قتل عام ہے۔

انھوں نے کہا درحقیقت امریکی شہریوں کے لیے وبا ایک قدرتی آفت کے ساتھ ساتھ انسانی ساختہ آفت بھی ہے، ملک میں گہری متعصبانہ روش نے اس وبا کو سیاسی رنگ دیا اور امریکی عوام، زندہ رہنا جن کا حق تھا، اپنی قیمتی جانیں گنوا بیٹھے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں