The news is by your side.

Advertisement

امریکا اور میکسیکو تجارتی اور سرحدی معاملات پر مذاکرات کریں گے

واشنگٹن: میکسیکو اور امریکا کے اعلیٰ اہلکار تجارتی اور سرحدی معاملات میں پائے جانے والے اختلافات کو ختم کرنے کے لیے مذاکرات کریں گے۔

تفصیلات کے مطابق پیر کو میکسیکو کی وزیر اقتصادیات گارسیلا مارکیز نے بتایا کہ وہ امریکی وزیر تجارت ولبر راس کے ساتھ مذاکرات کا ارادہ رکھتی ہیں۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق ملاقات کی تاریخ کا اعلان نہیں کیا گیا، یہ بھی بتایا گیا کہ میکسیکو کا جو وفد امریکی دورے پر جائے گا، وہ وزیر خارجہ مائیک پومپیو سے واشنگٹن میں ملاقات کرے گا۔

میکسیکو اور امریکا کی جانب سے مذاکرات شروع کرنے کا فیصلے امریکی صدر کے اس ٹویٹ کے بعد سامنے آیا جس میں انہوں نے عملی اقدامات کو وقت کی ضرورت قرار دیا ہے۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ میکسیکو سرحد پر دیوار کھڑی کرنا چاہتے ہیں، تاکہ امریکا میں مہاجرین کے داخلے کو روکا جاسکے، تاہم امریکی کانگریس ٹرمپ کے فیصلے کو ماننے سے انکاری ہے۔

خیال رہے کہ رواں سال جنوری میں امریکی نائب صدر مائیک پینس نے اپنے ایک بیان میں کہا تھا کہ میکسیکوسرحد کو محفوظ بنانے کے لیے مزید اقدامات کرنا ہوں گے۔

میکسیکوسرحد کومحفوظ بنانےکےلیےمزید اقدامات کرنا ہوں گے‘ مائیک پنس

انہوں نے یہ بھی کہا تھا کہ کانگریس کو دیوارکے لیے 5.7 ارب ڈالرزمنظورکرنا ہوں گے، مائیک پینس نے مطالبہ کیا تھا کہ 750 اضافی پٹرول ایجنٹس کے لیے 211 ملین ڈالرز منظور کیے جائیں، سرحد پر 2 ہزار اضافی اہلکاروں کے لیے 571 ملین ڈالرز منظور کیے جائیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں