The news is by your side.

Advertisement

انسانی حقوق پر امریکی رپورٹ جاری، مقبوضہ کشمیر کی صورت حال بھی شامل

واشنگٹن: امریکا نے انسانی حقوق پر 2019 کی رپورٹ جاری کر دی، رپورٹ میں مقبوضہ کشمیر کی صورت حال بھی شامل کی گئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق انسانی حقوق اور جمہوریت کے لیے نائب امریکی وزیر خارجہ نے خصوصی پریس کانفرنس کی، رابرٹ ڈیسٹرو نے اے آر وائی نیوز کے سوال پر جواب دیتے ہوئے کہا کہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر امریکا کو تشویش ہے۔

رابرٹ ڈیسٹرو نے بتایا کہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالیوں کی تفصیل بھی اس رپورٹ میں شامل ہے، کشمیر میں انٹرنیٹ کی بندش کا معاملہ بھارت سے اٹھایا گیا ہے، بھارت انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیاں بند کرے۔

نائب امریکی وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ بھارت کے معاملات پر بات کرنے سے ہم نہیں گھبرائیں گے، رپورٹ میں کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالی کا معاملہ تو شامل ہے تاہم شہریت کے قانون پر بھارت میں تشدد کی تفصیلات اس رپورٹ میں شامل نہیں کی گئی ہے۔

خیال رہے کہ آج مقبوضہ کشمیر میں بھارتی لاک ڈاؤن کا 222 واں روز ہے، کشمیری میڈیا کا کہنا ہے کہ وادی میں انٹرنیٹ، موبائل سروس بدستور معطل ہیں، کاروبار اور تعلیمی ادارے بند پڑے ہیں، بھارتی فوج کی جانب سے آئے دن مختلف علاقوں میں نام نہاد سرچ آپریشن کے دوران نوجوانوں کو گرفتار کیا جا رہا ہے، حریت رہنما 5 اگست سے نظر بند اور قید ہیں۔

گزشتہ روز ترجمان دفتر خارجہ عائشہ فاروقی نے ہفتہ وار بریفنگ میں کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں مزید 4 کشمیریوں کو شہید کیا گیا ہے، مقبوضہ کشمیر بین الاقوامی طور پر متنازع علاقہ ہے، اقوم متحدہ سلامتی کونسل اس کو بارہا متنازع خطہ قرار دے چکی ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں