The news is by your side.

Advertisement

امریکی سینیٹرزکاروس پر نئی پابندیاں عائد کرنے کا فیصلہ

واشنگٹن : امریکی در ڈونلڈ ٹرمپ کی روس کے ساتھ بہتر تعلقات کی خواہشات کےبرعکس امریکی سینیٹرز نے روس پر نئی پابندیاں عائد کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور ان کے قریبی لوگوں کی روسی سفارت کاروں سے دوستیوں نے جہاں امریکی انٹیلی جنس اداروں کو ناراض کیا ہوا ہے وہیں امریکی سینیٹرز بھی اس معاملے پر پریشان نظر آتے ہیں اور شاید یہی وجہ ہے کہ سینیٹرز نے صدر ٹرمپ کی خواہشات کے بر عکس روس پر نئی پابندیاں عائد کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔

دلچسپ بات یہ کہ ان نئی پابندیوں میں ایسی قانون سازی کی جارہی ہے، جو امریکی صدر کو ان پابندیوں کو کانگریس کی منظوری کے بغیر ختم کرنے سے باز رکھے گی۔

سینیٹر جان مکین ری پبلکن امریکی سینیٹرز کے مطابق روس پر نئی پابندیوں کی وجہ امریکی صدارتی انتخابات میں دخل اندازی، یوکرین میں کریمیا کی صورتحال، انسانی حقوق کی خلاف ورزی اور شام میں صدر اسد کی حکومت کو مدد فراہم کرنا ہے۔

سینیٹر لنڈسے گراہم ری پبلکن امریکی سینیٹرز ٹرمپ کے قریبی ساتھیوں کی روسی سفارت کاروں کے ساتھ قرابت پر سخت نالاں ہیں، مائیکل فلن کی برطرفی ہو یا جیمز کومی کو ان کے عہدے سے ہٹانا، روس کو لے کر امریکی کانگریس اور وائٹ ہاؤس میں شدید اختلافات پائے جاتے ہیں۔

دوسری جانب صدر ٹرمپ کے داماد جیرڈ کوشنر کی روسی سفارت کاروں کے ساتھ خفیہ ملاقاتوں کی تحقیقات کسی بھی وقت شروع ہو سکتی ہیں۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں