The news is by your side.

Advertisement

امریکی رپورٹ نے بھارتی بربریت کا پردہ چاک کردیا

واشنگٹن :امریکی اسٹیٹ ڈپارٹمنٹ کی رپورٹ نے بھارتی بربریت کا پردہ چاک کردیا، رپورٹ میں انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں، ماورائے عدالت قتل، مسلمانوں پر تشدد اور بنیادی حقوق غصب ہونے کی نشاندہی کی گئی ہے.

تفصیلات کے مطابق امریکی اسٹیٹ ڈپارٹمنٹ نے بھارت میں بڑے پیمانے پر انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں سے متعلق رپورٹ جاری کردی ، جس میں انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں کی نشاندہی کی گئی۔

رپورٹ میں ماورائے عدالت قتل،مسلمانوں پرتشدد،بنیادی حقوق غصب کرنے کے واقعات سمیت مقبوضہ کشمیر میں قتل عام،انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیاں بھی شامل ہیں۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ کرناٹک میں اسکولوں کی طالبات پر حجاب پہننے پر پابندی عائد کی گئی ،عالمی تنقید کے باوجود ریاست کے ہائی کورٹ نے اس پابندی کو برقرار رکھا۔

امریکی اسٹیٹ ڈپارٹمنٹ نے رپورٹ میں کہا ہے کہ بھارت میں مسلمانوں کونشانہ بنانےکی مصدقہ اطلاعات موصول ہوئیں، کچھ علاقوں میں مسلم برادری فرقہ ورانہ ،متعصبانہ تشددکاشکار ہے۔

رپورٹ میں کہا ہے کہ مسلمانوں کا استحصال، تعصب، زبردستی نقل مکانی پرمجبور کیا گیا، مسلمانوں پر گائے کی اسمگلنگ کا الزام عائد کرکے تشدد کیا گیا، پولیس کا ظالمانہ، غیر انسانی، ذلت آمیز سلوک عام ہوچکا ہے۔

امریکی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ دھمکیاں، صحافیوں کی گرفتاری مجرمانہ توہین کے قوانین کا استعمال عام ہے ،آزادی اظہار اور انٹرنیٹ کی آزادی پر بھی پاپندی عائد ہے، این جی اوز ، سول سوسائٹی کی فنڈنگ،آپریشنز پرسخت قوانین نافذ ہیں۔

اس سے پہلے رواں ماہ گیارہ اپریل کو امریکی وزیرخارجہ نے بھارت میں انسانی حقوق کی پامالی کا معاملہ اُٹھایا تھا اور سرکاری افسران، پولیس اور جیل حکام کو ملوث قرار دیا تھا،

Comments

یہ بھی پڑھیں