The news is by your side.

Advertisement

مفادات کی جنگ ہے، صادق سنجرانی سے ناانصافی کی جارہی ہے، عثمان ڈار

اسلام آباد : وزیراعظم کے معاون خصوصی عثمان ڈار نے کہا مفادات کی جنگ ہے، صادق سنجرانی سےناانصافی کی جارہی ہے، حاصل بزنجو سے متعلق اپوزیشن ارکان یقیناً ضمیر کی سنیں گے۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم کے معاون خصوصی عثمان ڈار نے چیئرمین سینیٹ کیخلاف عدم اعتماد کی تحریک کے حوالے سے کہا واقعی حکومت کو پیغام ہی دینا تھا تو 6 ماہ پہلے بھی کرسکتے تھے، این آراو نہیں ملا اوراحتساب کا عمل جاری ہے اس لیےتکلیف ہے۔

عثمان ڈار کا کہنا تھا مفادات کی جنگ ہے، صادق سنجرانی سےناانصافی کی جارہی ہے، صادق سنجرانی جیت گئے تو بلاول نے کہا آمر کے بیٹے کو شکست دی، آج اسی آمر کے بیٹے کیساتھ مل کر صادق سنجرانی کو ہٹایا جارہا ہے۔

حاصل بزنجو کا ریاستی اداروں کیخلاف بیانیہ رہا ہے

معاون خصوصی نے کہا حاصل بزنجو سے متعلق اپوزیشن ارکان یقیناً ضمیر کی سنیں گے، حاصل بزنجو کا تو ریاستی اداروں کیخلاف بیانیہ رہا ہے، اپوزیشن ایوان بالا کو غیر مستحکم کرنا چاہتی ہے۔

رہنما پی ٹی آئی عثمان کا کہنا تھاپیپلزپارٹی دورمیں25فیصدمہنگائی ہوئی اس وقت بھی استعفیٰ دےدیتے، ہم پرتنقیدفوری کرتےہیں،جب آپ پر تنقید ہوئی تو استعفےدےدیتے، ہم پرانگلیاں اٹھانےوالےاپنےدورپراخلاقی جرات کامظاہرہ کرتے۔

 تحریک عدم اعتماداپوزیشن کی شرمندگی کاباعث بنے گی، فیصل جاوید


دوسری جانب سینیٹرفیصل جاوید نے کہا چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی کیخلاف تحریک ناکام ہوگی، ہم اس قسم کی روایات آگےنہیں بڑھنےدیں گے۔

فیصل جاوید کا کہنا تھا تحریک عدم اعتمادنمبرزگیم نہیں اخلاقیات کی گیم ہے، تحریک عدم اعتماداپوزیشن کی شرمندگی کاباعث بنے گی۔

خیال رہے سینیٹ کا اجلاس شروع ہوچکا ہے ، اجلاس میں چیئرمین سینٹ صادق سنجرانی اور ڈپٹی چیئرمین سلیم مانڈوی والا کےخلاف تحریک عدم اعتماد کی قرارداد پر ووٹنگ ہوگی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں