The news is by your side.

Advertisement

بلاول بھٹو کی ابو بچاؤ تحریک دلچسپ مرحلے میں داخل ہو چکی ہے، عثمان ڈار

اسلام آباد : پاکستان تحریک انصاف کے رہنما عثمان ڈار نے کہا ہے کہ بلاول بھٹو کی ابو بچاؤ تحریک دلچسپ مرحلے میں داخل ہو چکی ہے، انہیں ہوش کے ناخن لیتے ہوئے سنجیدہ سیاست کرنی چاہیے۔

یہ بات انہوں نے بلاول بھٹو زرداری کے حالیہ بیان پر اپنے ردعمل میں کہی، انہوں نے کہا کہ پلانٹڈ سوال اور لکھا ہوا جواب خود بلاول کی جگ ہنسائی کا باعث بنا، پلانٹڈ پریس کانفرنس کے بعد یقین ہے کہ بلاول بھٹو کو کچھ نہیں معلوم۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ اب بلاول بھٹو کی ابو بچاؤ تحریک دلچسپ مرحلے میں داخل ہو چکی ہے، صدارتی نظام اور18ویں ترمیم کی باتیں صرف وقت کا ضیاع ہیں، بلاول کی اچانک آئین اور جمہوریت سے محبت کی وجہ سب جانتے ہیں۔

عثمان ڈار نے کہا کہ بلاول بھٹو کو نہ قوم کا درد ہے نہ عوام کی بھلائی کی فکر بلکہ ان کا مطالبہ صرف اپنے والد کی مقدمات سے رہائی ہے، پی ٹی آئی رہنما نے کہا کہ آصف زرداری سمیت پوری پیپلزپارٹی اپنے چیئرمین کو استعمال کر رہی ہے، بلاول بھٹو  زرداری ہوش کے ناخن لیں اور سنجیدہ سیاست کریں۔

صدارتی نظام پاکستان کے لئے نقصان دہ اور غیر جمہوری ہوگا،: بلاول بھٹو زرداری

واضح رہے کہ پاکستان بار کونسل کی تقریب میں شرکت کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بلاول بھٹو کا کہنا تھا کہ نیب کالا قانون اور مشرف کا بنایا ہوا ادارہ ہے، جسے پولیٹیکل انجینئرنگ اور سیاسی مفادات کے لئے بنایا گیا، احتساب بلاتفریق ہونا چاہیے، سب کے لئے ایک قانون ہونا چاہیے.

انہوں نے کہا کہ اس وقت شاید نیا سسٹم لانا مشکل ہوگا، اگر حکومت سسٹم کو ٹھیک کرنا چاہے تو ہم اس کا ساتھ دیں گے، مگر حکومت یوٹرن لیتی ہے، اب تک ایک بل پاس نہیں ہوا، حکومت کو ملک ،پارلیمنٹ اور معیشت چلانے میں کوئی دلچسپی نہیں. ریفرنڈم لانے کی باتیں غیرقانونی ہیں ایسی تجاویز نہیں دینی چاہیے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں