The news is by your side.

Advertisement

نوازشریف واپس نہ آئے تو عدالت ہم سے پوچھے گی، عثمان ڈار

اسلام آباد : وزیر اعظم کے معاون خصوصی عثمان ڈار نے کہا ہے کہ صرف ایک اسٹام پیپر پر گارنٹی مانگ رہے ہیں اس میں حرج کیا ہے؟ نوازشریف واپس نہ آئے تو عدالت ہم سے پوچھے گی، جے یو آئی ف انتشار کی سیاست کی طرف جارہی ہے۔

یہ بات انہوں نے اے آر وائی نیوز کے پروگرام الیونتھ آور میں میزبان وسیم بادامی سے گفتگو کرتے ہوئے کہی، انہوں نے کہا کہ وفاقی کابینہ نے نوازشریف کو علاج کیلئے انسانی بنیادوں پر باہرجانے کی اجازت دی، ہمیں میڈیکل بورڈ نے نوازشریف کی صحت سے متعلق آگاہ کیا تھا، مسلم لیگ ن کا مدعا نیب کے ساتھ ہے۔

ایک سوال کے جواب میں رہنما پی ٹی آئی کا کہنا تھا کہ کیا پاکستان میں پہلے کبھی ایساہوا ہے کہ ایک سزا یافتہ مجرم باہر گیا ہو؟ شریف خاندان سے صرف ایک اسٹام پیپر پر گارنٹی مانگ رہے ہیں اس میں حرج کیا ہے؟ ایسے اسٹام پیپر کی حیثیت نہیں تو دستخط کرنے میں کیا ہچکچاہٹ ہے۔

انہوں نے کہا کہ نوازشریف کی بیماری پر ن لیگ سیاست کررہی ہے، نواز شریف مجرم ہیں اور ان کو سات ارب کا جرمانہ ہوچکا ہے، نواز شریف کی گارنٹی ن لیگ کا کوئی بھی عہدیدار دے دے، اگر نوازشریف واپس نہ آئے تو عدالت ہم سے پوچھے گی۔

مولانا فضل الرحمان کے آزادی مارچ کے حوالے سے عثمان ڈار نے کہا کہ جے یو آئی ف انتشار کی سیاست کی طرف جارہی ہے، ہم نے بھی دھرنا دیا تھا، حکومت سے معاہدہ کیا اور دھرنا ختم کیا۔

پہلے کہتے تھے کہ ہمیں گھر سے فون آرہے ہیں کہ استعفیٰ لئے بغیر واپس نہیں آنا بلکہ استعفیٰ لے کر آئیں اور اب ویسے ہی جارہے ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں