ARYNews.tv | famous classical singer Ustad Fateh Ali khan died
The news is by your side.

Advertisement

استاد فتح علی خان انتقال کر گئے

اسلام آباد : برصغیر کے معروف کلاسیکل گائیک استاد فتح علی خاں رضائے الہی سے انتقال کر گئے ہیں، مرحوم طویل عرصہ سے پھپھڑوں کے عارضے میں مبتلا تھے۔

تفصیلات کے مطابق بر صغیر کے معروف غزل گائیک اور کلاسیکل موسیقی کے استاد سمجھے جانے والے فتح علی خان خالقِ حقیقی سے جا ملے، وہ طویل عرصے سے پھپڑوں کے عارضے میں مبتلا تھے اور مقامی اسپتال میں ان کا علاج جاری تھا۔

استاد فتح علی خان کا تعلق پٹیالہ کے موسیقی کے معروف گھرانے سے تھا ان کا شمار روایتی کلاسیکل گلوکاروں میں ہوتا تھا، وہ ساری زندگی سُر اور لے کی گھتیاں سلجھاتے رہے اور اس دوران جب بدلتے وقت نے موسیقی کو بھی جدت کے نام پرگزند پہنچانے کی کوشش کی تو استاد فتح علی خان روایتوں کے امین ثابت ہوئے۔

1935ءمیں بھارت کے قصبے پٹیالہ میں آنکھ کھولنے والے استاد فتح علی خاں عرف بڑے خاں نے چودہ سال کی عمر میں کولکتہ میں ہونیوالی آل بنگال میوزک کانفرنس میں اپنے بھائی استاد امانت علی خاں کے ہمراہ پرفارم کر کے دنیائے کلاسیکی موسیقی میں تہلکہ مچا دیا تھا۔

استاد فتح علی خاں کو تان کے اعتبار سے کلاسیکی موسیقی میں انفرادیت حاصل تھی وہ ایک جیسی تان کے ماہر گوئیے تھے ان کے پسندیدہ راگوں میں ماروہ، پٹھہار، کلاوتی اور گن کلی شامل تھے، مرحوم نے اپنے بھائی استاد امانت علی کے بعدطویل عرصہ بھتیجے اسدامانت علی کے ساتھ بھی جوڑی کے انداز میں گائیکی کا مظاہرہ کیا تھا۔

واضح رہے کہ استاد فتح علی خان، استاد امانت علی اور حامد علی کے چھوٹے بھائی تھے اور آج بھی ان کے بھتیجے اسد امانت علی خان اپنے خاندان کی روایتوں کو سنبھالے ہوئے ہیں۔

اس گھرانے نے پاکستان کی موسیقی کی دنیا میں بڑی خدمات انجام دی ہیں، غزل گوئی اور قوالی کو اسی خاندان نے دوام بخشا اور مشرقی موسیقی کو دنیا کے طول و عرض میں پہنچایا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں