The news is by your side.

Advertisement

بھارتی کانگریس رہنما کا شرمناک فعل، خودکشی کرلی

ہلدوانی: بھارت میں سیاسی رہنما نے بہو کی جانب سے شرمناک الزام عائد کیے جانے پر خود کو گولی مارکر ہلاک کرلیا، واقعے نے بھارتی معاشرے پر سوالات کھڑے کردیئے۔

اتراکھنڈ کے ہلدوانی میں کانگریس رہنما راجندر بہوگنا نے خود کو گولی مار کر ہلاک کر لیا۔ کانگریس لیڈر کی بہو نے ان کے خلاف پولیس میں مقدمہ درج کرایا تھا اور الزام عائد کیا تھا کہ وہ اپنی نابالغ پوتی کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کرتے تھے۔

بھارتی ریاست اتراکھنڈ کے علاقے ہلدوانی میں رہنے والے کانگریس رہنما اور مقامی مزدور یونین لیڈر نے گزشتہ روز خود کو گولی مار کر ہلاک کرلیا۔

واقعہ کی اطلاع ملتے ہی پولیس نے موقع پر پہنچ کر لاش کو قبضے میں لے کر پوسٹ مارٹم کے لیے بھیج دیا جبکہ اس حوالے سے مزید تحقیقات کی جاہی ہیں۔

بھارتی میڈیا کا کہنا ہے کہ کانگریس رہنما کی بہو نے ان کے خلاف مقامی تھانے میں مقدمہ درج کروایا تھا۔ جس میں الزام عائد کیا گیا تھا کہ راجندر بہوگنا اپنی نابالغ پوتی کے ساتھ جنسی چھیڑ چھاڑ کرتے تھے۔

بہو کی جانب سے شکایت پر پولیس نے پورے معاملے میں پوکسو ایکٹ کے تحت ان کیخلاف مقدمہ درج کرلیا تھا۔ کانگریس رہنما سال 2004-05 میں ریاست کی این ڈی تیواری حکومت میں وزیر بھی رہ چکے ہیں۔

پولیس کے مطابق بہو نے شکایت درج کراتے ہوئے سسر پر اپنی نابالغ بیٹی کے ساتھ جنسی چھیڑ چھاڑ کرنے کا الزام لگایا تھا، بہو کا کہنا تھا کہ کئی بار انکار کے بعد بھی وہ اپنی یہ گندی عادت نہیں چھوڑ رہے تھے۔

پولیس حکام نے میڈیا کو بتایا کہ ان کی بہو نے منگل کو بنبھول پورہ پولیس میں متوفی کے خلاف مقدمہ درج کرایا تھا جس کے بعد باقاعدہ طور پر کارروائی کا آغاز کردیا گیا تھآ۔

بدھ کے روز بہو اور سسر کے درمیان سمجھوتہ بھی ہوا تھا لیکن اس معاہدے کے بعد سسر نے بریلی روڈ پر واقع اپنے گھر کے قریب اوور ہیڈ ٹینک پر چڑھ کر خود کو گولی مار کر زندگی کا خاتمہ کرلیا۔

فائرنگ کی آواز سن کر اہل محلہ میں کہرام مچ گیا۔ اہل خانہ اور علاقہ کے لوگوں نے انہیں شدید زخمی حالت میں اسپتال پہنچایا جہاں ڈاکٹروں نے ان کی موت کی تصدیق کردی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں