The news is by your side.

Advertisement

عزیر بلوچ کو آج بھی اپنا بھائی مانتاہوں، ذوالفقار مرزا

کراچی: ذوالفقار مرزا کا کہنا ہے کہ وہ آج بھی عزیر بلوچ کو اپنا بھائی مانتے ہیں، شکر ہے وہ بابا لاڈلا کی طرح مارا نہیں گیا۔

کراچی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ذوالفقار مرزا نے کہا کہ عزیربلوچ کو آج بھی اپنابھائی مانتا ہوں،انہوں نے کہا کہ امن کمیٹی میں نے نہیں بنائی، امن کمیٹی ہمیں ورثے میں ملی تھی۔

دوسری جانب اے آروائی نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے پیپلزپارٹی کے رہنما سعید غنی کا کہنا ہے کہ تمام سیاسی جماعتوں نے لیاری میں اپنا اثرورسوخ بڑھانے کے لئے عزیربلوچ کو استعمال کرنے کی کوشش کی ۔

ذوالفقارمرزا کا کہنا تھا کہ ملک کے بھاگ جانے والوں کو واپس لانے کا بھی انتظام ہوگا، انہوں نے شکر ادا کیا کہ بابا لاڈلہ کی طرح عذیر بلوچ کا انجام نہیں ہوا۔

واضح رہے کہ عزیر بلوچ کو شہید ایس پی چوہدری اسلم نے پہلی بار گرفتار کیا تھا۔ گرفتاری کے بعد عزیر عدالت سے وہ ضمانت پر رہا ہوگیا تھا۔ 2009میں لیاری گینگ وار کے سرغنہ رحمان ڈکیت پولیس مقابلے میں مارا گیا۔ عبدالرحمان بلوچ عرف رحمان ڈکیت کی ہلاکت کے بعد عزیر بلوچ کو رحمان ڈکیت کا جانشین مقرر کیا گیا تھا اور کالعدم امن کمیٹی کی سربراہی بھی عزیر کے حوالے کردی گئی تھی۔

کراچی میں آپریشن شروع ہونے کے بعد اکتوبر 2013میں عزیر بلوچ اور بابا لاڈلہ کے درمیان علیحدگی ہوگئی۔ حکومت سندھ نے عزیر بلوچ کے سر کی قیمت 50لاکھ روپے مقرر کر رکھی تھی۔ عزیر بلوچ ، ارشدد پپو قتل کیس سمیت 100سے زائد مقدمات میں مطلوب تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں