The news is by your side.

Advertisement

ویکسین بنانے کے بہت قریب پہنچ چکے ہیں، ٹرمپ کا دعویٰ

واشنگٹن : امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے بتایا کہ تمام شہری گائیڈ لائن پر عمل کررہے ہیں اسی لیے کرونا وائرس کے نئے کیسز میں بتدریج کمی آرہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کرونا ٹاسک فورس کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے تمام شہری گائیڈلائنز پرعمل جاری رکھیں ہم کرونا وائرس کے خلاف جنگ ضرور جیتیں گے۔

ٹرمپ کا کہنا تھا کہ ہمارے سائنسدان ویکسین بنانے کے بہت قریب پہنچ چکے ہیں اور ساتھ ساتھ کرونا ویکسین کے ٹرائل بھی جاری ہیں۔

صدر ٹرمپ نے بتایا کہ مائیک پنس حفاظتی سازو سامان تمام ریاستوں کو مہیا کررہے ہیں، ہماری محنت سے کرونا وائرس کا پھیلاؤ کم ہوتا جارہا ہے۔

اس سے قبل امریکی صدر نے کہا تھا کہ ملیریا کی بیماری کا مقابلہ کرنے والی دوا ہی کرونا وائرس کے خلاف کارگر ہے تو ہم نئی ویکسین کی تیاری میں کیوں وقت اور پیسہ ضائع کریں۔

کرونا ویکسین نہیں بننے دوں گا کی ضد، ٹرمپ نے ڈاکٹر کو سزا دے دی

اس موقع پر سیکریٹری سائنس ولیم برائن نے صحافیوں کو بتایا کہ تیز گرمی میں وائرس تیزی ختم ہورہا ہے، تیز دھوپ اور تیز گرمی وائرس پر اثر انداز ہورہی ہے۔

خیال رہے کہ کرونا وائرس سے سب سے زیادہ متاثرہ ملک امریکا ہے جہاں ہلاکتوں کی تعداد 49 ہزار 800 سے تجاوز کرگئی جبکہ 8 لاکھ 80 ہزار سے زائد افراد متاثر ہوچکے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں