The news is by your side.

Advertisement

ہمارا سونا واپس کرو، وینزویلا کا بینک آف انگلینڈ کیخلاف کارروائی کا آغاز

لندن : وینزویلا کی حکومت نے اپنے کروڑوں ڈالر مالیت کے سونے کی واپسی کیلئے برطانیہ کے مرکزی بینک (بینک آف انگلینڈ) کے خلاف قانونی چارہ جوئی کا آغاز کردیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق وینزویلا کی جانب سے برطانیہ کے خلاف اپنا سونا واپس لینے کے لیے مقدمہ دائر کیا گیا ہے، یہ سونا وینزویلا پر امریکہ اور برطانیہ کی طرف سے عائد کردہ اقتصادی پابندیوں کے بعد ضبط کیا گیا تھا۔

برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی کے مطابق وینزویلا کی حکومت نے برطانیہ کے مرکزی بینک (بینک آف انگلینڈ) کے خلاف قانونی چارہ جوئی شروع کردی ہے تاکہ اس82 کروڑ ڈالر مالیت کا سونا واپس کرنے پر مجبور کیا جاسکے۔

وینزویلا میں حکام کا کہنا ہے کہ وہ چاہتے ہیں کہ بینک آف انگلینڈ میں موجود کچھ سونا بیچ کر اسے کورونا وائرس سے نمٹنے کے لیے کی جانے والی کوششوں میں استعمال کیا جائے۔

وینزویلا کا کہنا ہے کہ وہ اس بات پر تیار ہے کہ سونے کی فروخت سے حاصل ہونے والی رقم کو براہ راست اقوام متحدہ کو بھیج دیا جائے تاکہ اس بات کو یقینی بنایا جا سکے کہ یہ پیسہ کسی اور مقصد لیے استعمال نہ ہو۔

وینزویلا کا کہنا ہے کہ یہ رقم اقوام متحدہ کے ترقیاتی ادارے (یو این ڈی پی) کو منتقل کر دی جائے تاکہ کووڈ 19 سے نمٹنے کے لیے درکار طبی سامان خریدا جا سکے۔

یہ قانونی رسہ کشی اس وقت شروع ہوئی ہے جب وینزویلا کا صحت عامہ یا پبلک ہیلتھ کا نظام ابتری کا شکار ہوا اور اس عالمی وبا سے نمٹنے کی اس کی صلاحیت کے بارے میں شک و شبہات ظاہر کیے جانے لگے۔

لندن میں 14 مئی کو قائم کیے جانے والے اس مقدمے کی دستاویزات کے مطابق وینزویلا کے مرکزی بینک نے یہ استدعا کی ہے کہ ہنگامی بنیادوں پر یہ پیسہ منتقل کیا جانا چاہیے۔

بی بی سی کے مطابق دوسری جانب بینک آف انگلینڈ سے جب برطانوی خبر رساں ادارے نے رابطہ کیا تو اس نے اس بارے میں کچھ کہنے سے انکار کر دیا۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں