وینزویلا بحران: یورپین ممالک نے جان گائیڈو کو صدر تسلیم کرلیا، تنازع شدت آگئی
The news is by your side.

Advertisement

وینزویلا بحران: یورپین ممالک نے جان گائیڈو کو صدر تسلیم کرلیا

کراکس: وینزویلا میں سیاسی بحران مزید شدت اختیار کرگیا، اہم یورپین ممالک نے اپوزیشن لیڈر جان گائیڈو کو صدر تسلیم کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق فرانس، اسپین اور جرمنی سمیت دیگر طاقتور یورپین ممالک نے وینزویلا کے اپوزیشن لیڈر اور خود ساختہ صدر جان گائیڈو کو عبوری صدر تسلیم کرلیا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ یورپین ممالک نے صدر نکولس میڈورو کو ملک میں آٹھ دن کے اندر دوبارہ انتخابات کرانے کا 8 دن کا الٹی میٹم دیا تھا اور واضح کیا تھا کہ نہ کرانے کی صورت میں جان گائیڈو کو صدر تسلیم کرلیا جائے گا۔

یورپین ممالک نے جان گائیڈو کو عبوری صدر تسلیم کرنے کے بعد روز دیا ہے کہ وہ ملک میں صاف اور شفاف انتخابات کو جلد از جلد یقینی بنائیں۔

اسپین کے صدر پیڈرو سینچز کا کہنا تھا کہ وینزویلا میں دوبارہ جمہوریت کے لیے کوشاں ہیں، ہمارا مطالبہ ہے کہ ملک میں فوری الیکشن سمیت سیاسی قیدیوں کو رہائی ملنی چاہیے۔

دوسری جانب جرمن چانسلر انجیلا مرکل نے جان گائیڈو کی حمایت کرتے ہوئے کہا کہ وہ وینزویلا کے جائز عبوری صدر ہیں۔

وینزویلا کے اہم فوجی جنرل نے صدر ماڈورو کی مخالفت کا اعلان کردیا

علاوہ ازیں فرانسیسی صدر ایمانوئیل نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر جاری اپنے بیان میں کہا کہ وینزویلا کے عوام کا حق ہے کہ وہ ملک میں جمہوریت کے مطابق اپنے مطالبات کا اظہار کریں، گائیڈو ملک میں دوبارہ الیکشن کرانے میں عبوری صدر کی طور پر بخوبی ذمہ داری نبھائیں گے۔

خیال رہے کہ اپوزیشن لیڈر جون گوئیڈو نے 23 جنوری بدھ روز خود کو عوام کے سامنے قیام مقام صدر کا تھا اور جلد ہی فوج کی نگرانی میں صاف اور شفاف الیکشن کرانے کا اعلان کیا ہے، جس کے چند منٹ بعد ہی ڈونلڈ ٹرمپ نے اپوزیشن لیڈر جان گائیڈو کی حکومت کو تسلیم کرلیا تھا۔

وینزویلا کی حزبِ اختلاف نے اس انتخاب کو تسلیم کرنے سے انکارکیا تھا کیوں کہ انتخاب سے قبل حزبِ اختلاف کے بیشتر رہنماؤں اور امیدواروں کو یا تو قید کردیا گیا تھا۔ اس پر صدر نکولس ماڈور نے امریکا کے ساتھ سفارتی تعلقات ختم کردیے تھے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں