The news is by your side.

Advertisement

فریال تالپور کی بینک اکاؤنٹس فعال کرنے کی درخواست پر فیصلہ محفوظ

اسلام آباد: احتساب عدالت نے پیپلز پارٹی کی رہنما فریال تالپور کی بینک اکاؤنٹس فعال کرنے کی درخواست پر فیصلہ محفوظ کرلیا، فیصلہ 20 مارچ کو سنایا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت میں پیپلز پارٹی کی رہنما فریال تالپور کی بینک اکاؤنٹس فعال کرنے کی درخواست پر سماعت  ہوئی۔

دوران سماعت نیب نے بتایا کہ اربوں روپے کی ٹرانزکشن ملزمان کی مرضی سے کی گئی ، فریال تالپور کی درخواست میرٹ پرپوری نہیں اترتی،  فریال تالپور کےاکاؤنٹ قانون کے مطابق منجمد کیےگئے۔

وکیل فاروق ایچ نائیک کا کہنا تھا کہ نیب کاکہناہےانکوائری کی منظوری سےپہلےاکاؤنٹ منجمد کردیے گئے،  نیب تسلیم کرتاہے پہلے یہ کیس ایف آئی اے کا تھا ، انکوائری کی منظوری سےپہلےاکاؤنٹ منجمدکرنا خلاف قانون ہے۔

وکیل نے مزید کہا کہ فریال تالپور کاذاتی اکاؤنٹ ہے کوئی بے نامی اکاؤنٹ نہیں،  زرداری گروپ کا اکاؤنٹ کھلوانے نہیں آئے، زرداری گروپ کمپنی کااکاؤنٹ منجمد ہی نہیں کیاگیا۔

مزید پڑھیں : فریال تالپور منجمد بینک اکاؤنٹس کھلوانے کیلئے احتساب عدالت پہنچ گئیں

فاروق ایچ نائیک کا کہنا تھا کہ فریال تالپور کے اکاؤنٹ میں ایک روپیہ جعلی اکاؤنٹس سے نہیں آیا اور استدعا کی  فریال تالپور کےاکاؤنٹ فعال کرنےکاحکم دیا جائے۔

عدالت نے استفسار کیا کیا جعلی اکاؤنٹ سے فریال تالپور کے اکاؤنٹ میں رقوم آئیں، بعد ازاں احتساب عدالت نے پیپلز پارٹی کی رہنما فریال تالپور کی بینک اکاؤنٹس فعال کرنے کی درخواست پر فیصلہ محفوظ کرلیا، جو 20 مارچ کو سنایا جائے گا۔

یاد رہے فریال تالپور نے 3 منجمد بینک اکاؤنٹس کھلوانےکیلئےدرخواست دائر کی تھی ، جس میں کہا گیا تھا کہ نیب تاحال کوئی جرم ثابت نہیں کرسکا، عدالت منجمد اکاؤنٹس کھولنے کیلئےحکم جاری کرے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں