The news is by your side.

Advertisement

ایم کیو ایم ریلی پر تشدد: پولیس افسر کیخلاف احکامات جاری

کراچی میں ایم کیو ایم کی ریلی پر تشدد کی انکوائری رپورٹ کے بعد وزیراعلیٰ نے ایس ایس پی ساؤتھ کو ہٹانے کے احکامات جاری کر دیئے۔

تفصیلات کے مطابق ایم کیو ایم کی ریلی پر پولیس تشدد کی انکوائری رپورٹ منظرعام پر آگئی، رپورٹ کے مطابق 26 جنوری کو ایم کیو ایم نے ریڈزون میں مظاہرہ کیاتھا ریڈزون میں واقع ہوٹلز میں کرکٹ کےانٹرنیشنل کھلاڑی قیام پذیر تھے۔

رپورٹ آنے پر وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے ایس ایس پی ساؤتھ زبیر شیخ کو فوری ہٹانے کے احکامات جاری کرتے ہوئے ان کے خلاف محکمہ جاتی کارروائی کی ہدایت کر دی۔ وزیراعلیٰ نےڈی آئی جی ساؤتھ شرجیل کھرل سے وضاحت طلب کرلی ہے۔

وزیراطلاعات سعید غنی کا کہنا ہے کہ ایم کیو ایم نے اپنے احتجاجی روٹ کی خلاف ورزی کی تھی رپورٹ کے مطابق ایم کیوایم نے اپنے احتجاجی روٹ کی خلاف ورزی کی روٹ کے مطابق متحدہ کو ریڈ زون کے بجائے پریس کلب پر احتجاج کرنا تھا۔

انہوں نے کہا کہ پولیس کی بروقت کارروائی نہ ہونےسے ریلی ریڈ زون میں داخل ہوئی ریلی سےپی ایس ایل کے کھلاڑی اس دن پریکٹس کیلئےاسٹیڈیم نہ جاسکے جب کہ پی ایس ایل شیڈول کے مطابق کھلاڑیوں کو اسٹیڈیم جاکر پریکٹس کرنی تھی۔

سعید غنی کا کہنا تھا کہ وزیراعلیٰ سندھ نے سیکریٹری داخلہ کو واقعہ کی تحقیقات کا حکم دیا تھا ایم کیو ایم ایم پی اے کی نشاندہی پر تشددکرنے والے پولیس اہلکار کو معطل کر دیا گیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں