پولیس اہلکار پر تشدد کا الزام : سینیٹر اسلام الدین شیخ کا بیٹا گرفتار -
The news is by your side.

Advertisement

پولیس اہلکار پر تشدد کا الزام : سینیٹر اسلام الدین شیخ کا بیٹا گرفتار

کراچی : درخشاں پولیس نے ڈیفنس کے علاقے میں پولیس اہلکار پر تشدد کرنے والے تیسرے ملزم سنن شیخ کو گرفتار کرلیا،ملزم سینیٹر اسلام الدین شیخ کابیٹا ہے۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز کراچی کے پوش علاقے ڈیفنس خیابان شہباز پر کار سوار چار لڑکوں نے ڈیوٹی پر جانےوالے پولیس اہلکار بابر کو تشدد کا نشانہ بنایا۔

عینی شاھدین کے مطابق چاروں افراد نشے میں تھے، بعد ازاں پولیس نے بابر کی مدعیت میں چار ملزمان کیخلاف درج کیا تھا، ایف آئی آر کے اندراج کے بعد پولیس نے دوملزمان سندیب کمار اور روحیل حسن کو گرفتار کرلیا تھا تاہم مقدمے میں اہم پیشرفت کرتے ہوئے پولیس نے سندھ کی اہم سیاسی شخصیت سینیٹراسلام الدین شیخ کے بیٹے سنن شیخ کو حراست میں لے لیا۔

ملزم کیخلاف دہشت گردی کی دفعات کےتحت مقدمہ درج ہے، ذرائع کے مطابق گرفتار ملزم کے حوالے سے پولیس پراس کے خلاف کارروائی نہ کرنے کے لیے دباؤ بھی ڈالا جا رہا ہے ۔

ایف آئی آر کے حوالے سے پولیس کا کہنا ہے کہ ملزمان کی کی گاڑی خیابان شہباز پر کسی منی ٹرک سے ٹکرائی تھی، جس پر سندیپ اور ٹرک ڈرائیور کے درمیان جھگڑا ہوا اس دوران وہاں سے گزرنے والے پولیس اہلکار نے معاملہ رفع دفع کرانےکوشش کی تو نشے میں دھت ملزمان اہلکار بابر پر چڑھ دوڑے اور اسے مار مار کر لہو لہان کردیا، سندیب اور اس کے ساتھیوں نے باوردی اہلکار پر لوہے کی راڈ سے تشدد کیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں