The news is by your side.

Advertisement

یوکرین کے صدر جھوٹ بول رہے ہیں: روسی وزیر خارجہ

ماسکو: روسی وزیر خارجہ سرگئی لاروو نے کہا ہے کہ یوکرین کے صدر جھوٹ بول رہے ہیں، ہم نے سیکیورٹی کو یقینی بنانے کے لیے ہر آپشن پیش کیا تھا۔

روسی میڈیا کے مطابق روسی وزیر خارجہ نے ایک بیان میں یوکرین پر حملے کی وضاحت کرتے ہوئے کہا ہے کہ حملے سے قبل سیکیورٹی کو یقینی بنانے کے لیے ہر آپشن پیش کیا تھا، یوکرین کے صدر جھوٹ بول رہے ہیں۔

انھوں ںے کہا مغرب نے مسلسل کیف حکومت کے جرائم کا دفاع کیا ہے، مغرب کی مسلسل بے جا حمایت نے ہی یوکرین کو المیے میں ڈالا ہے۔

سرگئی لاروو نے کہا صدر ولادی میر پیوٹن نے فرانسیسی ہم منصب سے گفتگو میں واضح پیغام دیا تھا کہ نیٹو کی توسیع ناقابل قبول ہے۔ انھوں نے کہا مشترکہ مذاکرات کے ذریعے تمام آپشنز پر عمل کیا جا سکتا ہے، ایسے آپشنز جو یوکرین، یورپی ممالک اور روسی فیڈریشن کے لیے مناسب ہوں۔

یوکرینی صدر عالمی برادری کی بے وفائی پر آبدیدہ

واضح رہے کہ گزشتہ روز صدر ولادی میر پیوٹن نے ایک بیان میں کہا تھا کہ روس کا یوکرین پر قبضے کا کوئی ارادہ نہیں ہے، یوکرینی فوج اپنے ہتھیار ڈال دے۔

ایک طرف امریکا یوکرینی دارالحکومت کیف میں خوفناک لڑائی کی پیش گوئی کر رہا ہے، دوسری طرف یوکرین عالمی برادری کی جانب سے مکمل طور پر ناامید ہو چکا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں