The news is by your side.

Advertisement

لاکھوں روپے ٹپ ملنے پر ریسٹورنٹ نے ویٹرس کو نوکری سے نکال دیا

ریسٹورنٹ انتظامیہ نے حیران کن طور پر ویٹرس کو 7 لاکھ 83 ہزار روپے سے زائد ٹپ وصول ہونے پر نوکری سے نکال دیا۔

ریسٹورنٹس میں کھانا کھانے والے لوگ ویٹر اور ویٹرس کی سروس سے خوش ہوکر کچھ اضافی رقم دیتے ہیں جو کھانے کو اچھے انداز سے پیش کرنے اور خیال رکھنے کا انعام ہوتا ہے تاکہ ویٹر یا ویٹرس مزید بہتر کارکردگی دکھائے۔

ایسے ہی انعام کے طور پر برینڈٹ نامی ایک ویٹرس کو 40 گاہکوں کو اچھے انداز سے کھانا پیش کرنے پر 4400 ڈالرز ٹپ ملی، جو ویٹرس کےلیے انتہائی خوشگوار لمحہ تھا لیکن کچھ ہی دیر بعد اس کی خوشی افسوس میں تبدیل ہوگئی کیوں کہ ریسٹورنٹ انتظامیہ سے اسے نوکری سے فارغ کردیا۔

ریسٹورنٹ انتظامیہ نے برینڈٹ سے ٹپ میں وصول ہونے والی رقم دیگر عملے میں بھی تقسیم کرنے کا کہا جسے ویٹرس نے ماننے انکار کردیا کیوں کہ اس مہمانوں کو تنہا خدمات فراہم کی تھیں۔

ٹپ میں ملنے والی رقم تقسیم نہ کرنے پر ریسٹورنٹ انتظامہ نے ویٹرس کو نوکری سے نکال دیا۔

واقعے کا علم ہونے پر ریسٹورنٹ میں پارٹی کرنے والے چالیس مہمانوں میں سے ایک گرانٹ وائز نے ریسٹورنٹ انتظامیہ سے ٹپ کی پالیسی تبدیل کرنا مطالبہ تاہم انتظامیہ نے ماننے سے انکار کردیا۔

گرانٹ وائز نے ویٹرس برینڈٹ کی امداد کےلیے چندہ مہم شروع کردی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں