The news is by your side.

Advertisement

ہم نے وزیراعظم کیلیے اپنے 2 نام بھجوا دیے ہیں، پی ٹی آئی رہنما

فواد چوہدری نے کہا ہے کہ ہم نے وزیراعظم کیلیے اپنے 2 نام بھجوا دیے ہیں اگر وہ 7 دن میں نام نہیں دیتے تو ان میں سے نمبر ون نام فائنل ہوجائے گا۔

سابق وفاقی وزیر اور پی ٹی آئی رہنما فواد چوہدری نے اسلام آباد میں شہباز گل ودیگر پارٹی رہنماوں کے ہمراہ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہم نے وزیراعظم کیلیے اپنے 2 نام بھجوا دیے ہیں اگر وہ 7 دن میں نام نہیں دیتے تو ان میں سے نمبر ون نام فائنل ہوجائے گا۔

فواد چوہدری نے کہا کہ سپریم کورٹ کے بینچ پر مسلسل تنقیدی حملے ہورہےہیں، آج اپوزیشن کے لوگوں نے سپریم کورٹ پراثرانداز ہونے کی کوشش کی جس کی ہم بھرپور مزاحمت کرینگے۔ یہ کہتے ہیں ہم احتجاج کی کال دینگے، اگرعمران خان نے احتجاج کی کال دی تو ان لوگوں کا گھروں میں رہنا مشکل ہوجائیگا۔

سابق وفاقی وزیر نے مزید کہا کہ ہم نے آپ کے کہنےپر ان کیمرہ اجلاس بلایا، شہباز شریف اور بلاول کو دعوت دی کہ آئیں اور دھمکی آمیز خط دیکھیں، ہم نےکہا کہ اب بھی وقت ہے معاملات پراس طرح سے گفتگو نہ کریں، اس خط کی تمام تفصیلات ابھی عوام کےسامنے نہیں رکھیں کیونکہ وزیراعظم نے کہا تھا کہ ہمارے لئے ملک کا مفاد ترجیح ہے۔

انہوں نے کہا کہ 90 دن کےاندراندر پاکستان میں الیکشن ہونے ہیں، ابھی اپوزیشن کے رہنماؤں کا کافی لمبا نوحہ سنا ہے، ایک ہی بات کو 10،10بندے کہہ رہے ہیں تو لوگ بھی بورہوجاتے ہیں، ہمارے 22لوگ اٹھا کر اپنی پارٹی میں لے گئے، کیا ہارس ٹریڈنگ آئین کا حصہ ہے۔

فواد چوہدری نے کہا کہ ان کی طرف سے کہا جارہا ہے کہ شہزاد اکبر باہر چلا گیا، وہ تو باہر نہیں جاتا اب آپ اندرچلے جائیں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں