The news is by your side.

Advertisement

”مغرب نے یوکرین سے نیٹو رکنیت کا وعدہ کر کے غلطی کی“

یورپی یونین کا کہنا ہے کہ مغربی ممالک نے یوکرین سے نارتھ اٹلانٹک ٹریٹی آرگنائزیشن (نیٹو) کی رکنیت کا وعدہ کر کے بڑی غلطی کی۔

فرانسیسی ٹیلی ویژن ٹی ایف 1 سے انٹرویو کے دوران یورپی یونین کی خارجہ پالیسی کے نمائندے جوزپ بوریل نے کہا کہ مغربی ممالک نے روس کے ساتھ تعلقات میں بڑی غلطیاں کی ہیں۔

جوزپ بوریل نے کہا کہ یوکرین اور جارجیا سے نیٹو کی رکنیت کے وعدے بڑی غلطیاں ہیں، تسلیم کرنے کے لیے تیار ہیں کہ ہم نے بہت سی غلطیاں کیں۔

مزید پڑھیں: روس کے اعلان نے دشمنوں کے ہوش اڑا دیے

ان کا کہنا تھا کہ ماضی میں ہم نے روس کے ساتھ قریب ہونے کا موقع گنوا دیا، میرے خیال میں یہی بڑی غلطیاں ہیں کہ آپ وعدہ کریں اور اسے پورا نہ کر سکیں۔

خیال رہے کہ یورپی یونین کے رہنماؤں اور نیٹو حکام نے یوکیرن کو اتحاد میں شامل کرنے کے وعدوں کے ساتھ ساتھ 27 ممالک پر مشتمل یورپی یونین میں بھی شامل کرنے کا کہا تھا جس پر سخت ناراض ہے۔ فروری کے آخر میں جیسے ہی روس نے یوکرین میں فوجی آپریشن شروع کیا یورپی یونین اور نیٹو اپنے وعدے بھول گئے۔

نیٹو میں شامل ممالک نے یوکرین کو روس کے خلاف جنگ کے لیے جنگی سزا و سامان تو فراہم کیا ہے لیکن اس لڑائی میں براہ راست شامل ہونے سے معذرت کرلی ہے جس کا نتیجہ یہ نکلا ہے کہ یوکرین اب روس کے خلاف تنہائی جنگ لڑ رہا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں